بی جے پی کو جھٹکا، تیجسوی کے بعد اکھلیش نے بھی ممتا بنرجی کی حمایت کا کیا اعلان

اکھلیش یادو کا کہنا ہے کہ ’’کچھ دنوں پہلے میری بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی سے بات ہوئی۔ میں نے ان سے کہا ہے کہ بنگال میں ترنمول کانگریس کی جیت سماجوادی پارٹی کی جیت ہوگی۔‘‘

اکھلیش یادو، تصویر یو این آئی
اکھلیش یادو، تصویر یو این آئی
user

تنویر

مغربی بنگال میں اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کا اعلان ہونے کے بعد سیاسی ماحول پوری طرح سے گرم ہے۔ ایک طرف بی جے پی ترنمول کانگریس کے زیادہ سے زیادہ لیڈران و کارکنان کو توڑ کر اپنی طرف کھینچنے کی کوششوں میں لگی ہوئی ہے، اور دوسری طرف سیکولر پارٹیاں ممتا بنرجی کی حمایت کرنے کا اعلان کرتی ہوئی نظر آ رہی ہیں۔ تازہ ترین خبروں کے مطابق آر جے ڈی لیڈر تیجسوی یادو کے بعد سماجوادی پارٹی لیڈر اکھلیش یادو نے بھی مغربی بنگال میں ممتا بنرجی کی حمایت کا اعلان کر دیا ہے۔

اکھلیش یادو نے آج ’رائزنگ یو پی‘ کے اسٹیج سے مغربی بنگال اسمبلی انتخاب میں ترنمول کانگریس کی حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ’’میری پارٹی ممتا بنرجی کو اسمبلی انتخاب میں حمایت دے رہی ہے۔ پارٹی کے قومی نائب صدر کرنمے نندا اور پارٹی کے تمام کارکنان اسمبلی انتخابات میں ترنمول کانگریس کے لیے تشہیری مہم چلائیں گے۔‘‘

اکھلیش یادو نے کہا کہ ’’کچھ دنوں پہلے ان کی بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی سے بات ہوئی۔ میں نے ان سے کہا ہے کہ بنگال میں ترنمول کانگریس کی جیت سماجوادی پارٹی کی جیت ہوگی۔‘‘ انھوں نے مزید کہا کہ ’’بنگال میں اس وقت بی جے پی اور اس کی معاون پارٹیاں چھپی ہوئی ہیں۔ جیسے ہی انتخابات ختم ہوں گے، بی جے پی کی چھپی ہوئی معاون پارٹیاں یو پی آ جائیں گی۔ لیکن ریاستی عوام اب انھیں سبق سکھانے کو تیار ہیں۔‘‘

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔