بہار اسمبلی انتخاب: تشہیر کے دوران مخالفت سے ناراض نتیش کمار نے کہا 'مت دینا ووٹ'

نتیش کمار ہفتہ کے روز تیگھڑا سیٹ سے کھڑے جے ڈی یو امیدوار کے لیے ووٹ مانگنے پہنچے تھے۔ نتیش نے جیسے ہی تقریر شروع کی، بھیڑ میں سے کچھ لوگ مخالفت کرنے لگے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

آصف سلیمان

بہار اسمبلی انتخاب کے پہلے مرحلہ میں اب صرف تین دن باقی رہ گئے ہیں اور اس درمیان بہار کے وزیر اعلیٰ اور جنتا دل یو صدر نتیش کمار کو ایک بار پھر تشہیر کےد وران زبردست مخالفت کا سامنا کرنا پڑا۔ اس مخالفت سے نتیش کمار کافی ناراض ہوئے اور صبر کا دامن بھی چھوڑ دیا۔ انھوں نے مخالفت کر رہے لوگوں سے کہہ دیا کہ "تم لوگ ووٹ مت دینا۔ جا کر اپنے باپ سے پوچھو۔"

دراصل ہفتہ کے روز نتیش کمار تیگھڑا اسمبلی سیٹ سے کھڑے جنتا دل یو امیدوار ویریندر کمار کے لیے ووٹ مانگنے پہنچے تھے۔ نتیش کمار نے جیسی ہی تقریر شروع کی، بھیڑ میں سے کچھ لوگ مخالفت کرنے لگے۔ اس دوران نتیش کمار نے اپنی تقریر جاری رکھی۔ لیکن لگاتار مخالفت سے نتیش ناراض ہو گئے اور مائک سے ہی مخالفت کرنے والوں کو کہا کہ "تم لوگ ووٹ مت دینا، تم پندرہ بیس لوگ ہو۔ پیچھے دیکھو، ہزاروں لوگ ہیں۔"

نتیش کمار اتنے پر ہی خاموش نہیں ہوئے بلکہ بھیڑ میں اپنے حامیوں سے ہاتھ اوپر اٹھانے کے لیے کہا اور مخالفت کرنے والوں سے بولے "اپنے دائیں بائیں دیکھ لو، کتنے لوگ ہیں۔ ہمیں پتہ ہے کہ یہ سب کس کے لیے کر رہے ہو۔ یہ لوگ ان لوگوں کا حال ٹھیک کر دیں گے، ان کا برا حال کر دیں گے۔ سمجھ لو۔"

غور طلب ہے کہ اس بار کے بہار اسمبلی انتخاب میں تشہیر کے دوران نتیش کمار کو کافی مخالفت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ پہلے بھی کچھ مواقع پر مخالفت کی صورت میں نتیش کمار ناراضگی ظاہر کر چکے ہیں۔ حالانکہ پہلے نتیش کمار کے ساتھ ایسا نہیں ہوتا تھا اور اگر بھیڑ میں سے کوئی ہنگامہ کرتا بھی تھا تو وہ اپنی تقریر جاری رکھتے تھے۔ لیکن اس مرتبہ ان کا رویہ کافی کچھ بدلا ہوا نظر آ رہا ہے۔

next