کسانوں کی قسمت بدلنے میں کارآمد ثابت ہو سکتی ہے جانوروں کی ’آئی وی ایف‘ تکنیک

مرکزی وزیر نے پرشوتم روپالا نے آمدنی پیدا کرنے کے بے پناہ امکانات اور آئی وی ایف تکنیک کے ذریعہ بچھڑوں کی پیدائش کے پائیدار ماڈل پر زور دیا۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

نئی دہلی: جانوروں کی پرورش، ڈیری اور ماہی پروری کے وزیر پرشوتم روپالا نے کسانوں کی اقتصادی خوشحالی کے لئے ان ویٹرو فرٹیلائزیشن (آئی وی ایف) تکنیک (ٹیسٹ ٹیوب) سے بچھڑے تیار کرنے کے عمل کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ اس سے دودھ کی پیداوار میں انقلابی تبدیلی آسکتی ہے۔ روپالا نے آئی وی ایف تکنیک سے ملک میں پہلا آئی وی ایف بنی بچھڑا تیار کرنے و الے جے کے ٹرسٹ بوووگجکس پنے کا آج دورہ کرنے کے بعد کہاکہ اس طریقہ سے بڑے پیمانہ پر اقتصادی فائدہ حاصل کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے ادارے اس کے اس ماڈل کی تعریف کی۔

اس موقع پر مرکزی وزیر نے کہا کہ مجھے اسسٹڈ ری پروڈکٹیو ٹکنالوجیز کے لئے ڈاکٹر وجے پت سنگھانیا سنٹر آف ایکسلنس میں ساہیوال نسل کی گائے سے نکالے گئے اوسائٹس کے اثرکا تجربہ کرنے کا موقع ملا۔ انہوں نے کہا کہ ’سمادھی‘ اور ’گوری‘ ساہیوال نسل کی گایوں کو دیکھ کر مجھے خوشی ہوئی جنہوں نے 100 اور 125 بچھڑے پیدا کئے ہیں۔ ہر ایک بچھڑا ایک لاکھ روپے کی قیمت پر فروخت کیا گیا تھا۔ مجھے بتایا گیا کہ ان دو گایوں سے جے کے بوواجنکس کو ایک سال میں تقریباً ایک کروڑ روپے کی آمدنی حاصل ہوئی۔


مرکزی وزیر نے آمدنی پیدا کرنے کے بے پناہ امکانات اور آئی وی ایف تکنیک کے ذریعہ بچھڑوں کی پیدائش کے پائیدار ماڈل پر زور دیا۔ اس ٹرسٹ نے کچھ خاص دیسی گایوں کی نسلوں پر توجہ دینے کے ساتھ جینیاتی طورپربہتر گایوں ا ور بھینسوں کی تعداد میں اضافہ لئے آئی وی ایف اور ای ٹی تکنالوجیز کی شروعات کی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔