علی گڑھ مسلم یونیورسٹی: طلبا یونین انتخابات کا جلد کیا جائے اعلان، ورنہ بڑے پیمانے پر احتجاج کیا جائے گا، طلبا کا انتباہ

طلبا رہنما جنیب حسن نے کہا کہ "انتخابات کو ہوئے چار سال ہو گئے ہیں۔ ہم نے کچھ نہیں کہا کیونکہ درمیان میں وبائی بیماری تھی لیکن اب ہم انتخابات کے انعقاد میں کوئی تاخیر قبول نہیں کریں گے۔"

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی، تصویر آئی اے این ایس
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

علی گڑھ: علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) کے طلبا نے انتباہ دیا ہے کہ اگر طلبا یونین انتخابات کی تاریخوں کا فوری اعلان نہیں کیا گیا تو وہ بڑے پیمانے پر احتجاج کریں گے۔ خیال رہے کہ اے ایم یو میں 2018 سے انتخابات نہیں ہوئے ہیں، جس کی وجہ سے طلبا میں غم و غصہ پایا جاتا ہے۔

طلبا رہنما جنیب حسن نے کہا کہ وائس چانسلر الیکشن نہ کروا کر طلبا کے حقوق پامال کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ "انتخابات کو ہوئے چار سال ہو گئے ہیں۔ ہم نے کچھ نہیں کہا کیونکہ درمیان میں وبائی بیماری تھی لیکن اب ہم انتخابات کے انعقاد میں کوئی تاخیر قبول نہیں کریں گے۔"


دریں اثنا، اے ایم یو کے پراکٹر وسیم علی نے کہا، "انتخابات کے انعقاد میں تاخیر کورونا کی وبائی بیماری کی وجہ سے ہوئی تھی۔ اب جب کہ صورتحال بہتر ہوئی ہے، چیزیں آہستہ آہستہ پٹری پر آ رہی ہیں۔ طلبا یونین کے انتخابات جلد ہی کرائے جائیں گے۔"

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔