مہنگائی کی زد میں آیا سویڈن، 1993 کے بعد سب سے زیادہ خستہ حالی

کیرولن نینڈر نے جمعہ کو ایک پریس ریلیز میں کہا کہ 2000 کی دہائی میں پیمائش کی گئی بجلی کی قیمتوں میں یہ سب سے زیادہ ماہانہ تبدیلی ہے۔

مہنگائی کی زد میں آیا سویڈن، تصویر آئی اے این ایس
مہنگائی کی زد میں آیا سویڈن، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

سویڈن میں دسمبر 2021 میں 1993 کے بعد سب سے زیادہ مہنگائی درج کی گئی ہے۔ ایک طے شرح سود کے ساتھ پیمائش کی گئی صارفین قیمتوں میں ایک سال پہلے کی یکساں مدت کے مقابلے میں 4.1 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔ اس کی اہم وجہ بجلی کی لاگت ہے جو گزشتہ کچھ مہینوں میں کافی بڑھ گئی ہے۔ دسمبر میں یہ روش بہت تیز ہو گئی۔ اسٹیٹسٹکس سویڈین کے چیف اسٹیٹسٹکس کیرولن نینڈر نے جمعہ کو ایک پریس ریلیز میں بتایا کہ 2000 کی دہائی میں پیمائش کی گئی بجلی کی قیمتوں میں یہ سب سے زیادہ ماہانہ تبدیلی ہے۔

خبر رساں ایجنسی سنہوا کی ایک رپورٹ کے مطابق کپڑوں اور ٹرانسپورٹیشن سروسز کی طرح خوردنی اشیاء، خصوصاً سبزیوں کی قیمت میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ بجلی کی بڑھتی لاگت کے سبب سویڈش حکومت نے اس ہفتہ کے آغاز میں تقریباً 18 لاکھ گھروں کو معاضہ دینے کا وعدہ کیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔