اصلاح کے لئے بیک فٹ میں 150 باؤنسر گیندیں کھیلیں: شیفالی ورما

شیفالی نے کہا کہ سید مشتاق علی ٹی 20 ٹرافی کے مدنظر منعقدہ ہریانہ مرد ٹیم کے کیمپ سے مجھے کافی فائدہ ملا ہے۔ پہلے میرا بیک فٹ بہت کمزور تھا لیکن رنجی گیند بازوں کو کھیلنے کے بعد مجھے تکنیک میں مدد ملی

شیفالی ورما، تصویر آئی اے این ایس
شیفالی ورما، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

نئی دہلی: ہندوستانی خواتین ٹیم کی سلامی بلے باز شیفالی ورما نے کہا کہ ان کا ہدف ہر سیریز سے سبق حاصل کرنا اور بطور کرکٹر اصلاح کرنا ہے۔ ان کے مطابق اس سال سید مشتاق علی ٹی ٹوئنٹی ٹرافی کے مدنظر منعقدہ ہریانہ مرد ٹیم کے کیمپ میں ٹریننگ کرنا ان کے لئے فائدہ مند ثابت ہوا ہے۔ اس سے ان کے بیک فٹ پر کھیلنے میں اصلاح ہوئی ہے۔

دراصل ٹی ٹوئنٹی عالمی کپ کے بعد جنوبی افریقہ کے خلاف پہلی ٹی ٹوئنٹی سیریز میں شیفالی باونسر کے خلاف پہلے کے مقابلے میں کہیں زیادہ پرسکون نظر آئیں۔ اس سلسلے میں انہوں نے کہا کہ یہ میری پریکٹس کا نتیجہ تھا۔ اس سیریز سے پہلے میں ایک منصوبہ کے مطابق 150 باونسر گیندیں کھیلیں اور ایک ہی طرح کی بار بار پریکٹس کی۔ مجھے لگتا ہے کہ میں نے جنوبی افریقہ سیریز میں بہتر کارکردگی کی ہے۔ اگر آپ کسی چیز میں بہتر ہونے کی کوشش کرتے ہیں اور صرف ایک بار کوشش کرنے کے بعد مطمئن ہو جاتے ہیں تو یہ کبھی کام نہیں کرتا ہے۔

شیفالی نے کہا کہ اس سال سید مشتاق علی ٹی ٹوئنٹی ٹرافی کے مدنظر منعقدہ ہریانہ مرد ٹیم کے کیمپ سے مجھے کافی فائدہ ملا ہے۔ پہلے میرا بیک فٹ بہت کمزور تھا لیکن رنجی گیند بازوں کو کھیلنے کے بعد مجھے تکنیک میں مدد ملی اور میرے اعتماد میں اضافہ ہوا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔