آسٹریلیا میں ٹی ۔20 عالمی کپ کا انعقاد مشکل: عرفان پٹھان

عرفان پٹھان نے کہا کہ آسٹریلیا میں لوگ خصوصی طور سے اپنے ضابطوں پر عمل کرتے ہیں۔ وہاں چھوٹے سے چھوٹے ضابطوں پر بھی عمل کیا جاتا ہے۔ وہ ہر حالت کو اچھی طرح سمجھ کر ہی کوئی قدم اٹھاتے ہیں

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

نئی دہلی: ہندوستان کے سابق کرکٹ کھلاڑی عرفان پٹھان نے اس سال آسٹریلیا میں ٹی ٹوئنٹی عالمی کپ کے انعقاد پر اندیشہ ظاہر کیا ہے۔ اسٹار اسپورٹ کے پروگرام کرکٹ کنکٹیڈ میں سابق ہندوستانی تیز گیند باز عرفان پٹھان نے کہا کہ آسٹریلیا میں کھیلے جانے والے عالمی کپ کے سلسلے میں کافی بحث ہو رہی ہے لیکن اس کے انعقاد پر مجھے اندیشہ ہے۔ ایسا اس لئے ہے کیونکہ یہ عالمی کپ آسٹریلیا میں کھیلا جانا ہے اور میں وہاں رہا ہوں۔

عرفان پٹھان نے کہا کہ آسٹریلیا میں لوگ خصوصی طور سے اپنے ضابطوں پر عمل کرتے ہیں۔ وہاں چھوٹے سے چھوٹے ضابطوں پر عمل کیا جاتا ہے۔ وہ ہر حالت کو اچھی طرح سمجھ کر ہی کوئی قدم اٹھاتے ہیں۔ کھیل اور کوارنٹائن کے ضابطوں کو دیکھ کر مجھے عالمی کپ کے انعقاد پر اندیشہ ہے۔

کرکٹ آسٹریلیا کے صدر ارل ایڈنگس نے گزشتہ روز کہا تھا کہ عالمی وبا کے دوران ٹی ٹوئنٹی کا انعقاد ’ناممکن ‘ ہے۔ آئی سی سی کو 18 اکتوبر سے 15 نومبر تک ہونے والے ٹورنامنٹ کے بارے میں فیصلہ کرنا ہے، جس نے ورلڈ کپ سے متعلق فیصلے کو گزشتہ ہفتے بورڈ کے اجلاس میں جولائی تک ملتوی کردیا تھا۔

آئی سی سی بورڈ میں حصہ لینے والے ایڈنگ کے مطابق وقت کافی تیزی سے بڑھ رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹورنامنٹ میں حصہ لینے والے 16 ممالک میں سے کئی ملک اب بھی عالمی وبا کی زد میں ہیں۔ ٹورنامنٹ کا انعقاد کرنا کافی مشکل ہے اور کرکٹ آسٹریلیا نے اس کے لئے آئی سی سی کو دیگر متبادل بتائے ہیں۔