دھونی مدد کرتے ہیں لیکن مکمل حل نہیں بتاتے: پنت

ہندوستان کے لئے 13 ٹیسٹ، 16 ون ڈے اور 28 ٹی -20 میچ کھیل چکے رشبھ پنت نے کہا کہ مہندر سنگھ دھونی ایسا اس لئے کرتے ہیں تاکہ میں ان پر انحصار نہ رہوں۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

نئی دہلی: ہندوستان کے نوجوان وکٹ کیپر بلے باز رشبھ پنت نے کہا ہے کہ سابق کپتان مہندر سنگھ دھونی ہمیشہ مدد کرتے ہیں لیکن مکمل حل نہیں بتاتے کیونکہ انہیں لگتا ہے کہ کھلاڑی کو خود کفیل ہونا چاہیے۔مہندر سنگھ دھونی گزشتہ سال انگلینڈ میں ہوئے آئی سی سی ورلڈ کپ میں نیوزی لینڈ کے خلاف سیمی فائنل مقابلے کے بعد سے اب تک میدان سے باہر ہیں۔ اگرچہ وہ آئی پی ایل سے کرکٹ میں واپسی کرنے والے تھے لیکن کورونا وائرس کی وجہ سے ٹورنامنٹ کے غیر معینہ مدت کے لئے ملتوی ہونے کی وجہ سے ایسا ممکن نہیں ہو سکا۔

رشبھ پنت نے آئی پی ایل کی اپنی ٹیم دہلی كیپٹلس کے انسٹاگرام لائیو سیشن کے دوران کہا کہ مہندر سنگھ دھونی میرے لئے میدان کے باہر اور اندر ایک استاد کی طرح ہیں۔ میں کسی بھی پریشانی کے لئے کبھی بھی ان سے مدد مانگ سکتا ہوں۔ لیکن وہ کبھی بھی اس کے لئے مجھے مستقل حل نہیں بتاتے ہیں۔

ہندوستان کے لئے 13 ٹیسٹ، 16 ون ڈے اور 28 ٹی -20 میچ کھیل چکے رشبھ پنت نے کہا کہ مہندر سنگھ دھونی ایسا اس لئے کرتے ہیں تاکہ میں ان پر انحصار نہ رہوں۔ وہ صرف مجھے پریشانی کا حل خود نکالنے کے لئے اشارہ دیتے ہیں۔ وہ ساتھ ہی میرے پسندیدہ بلے باز پارٹنر ہیں، حالانکہ ایسا ہمیشہ نہیں ہوتا ہے۔

دھونی کے جانشین مانے جا رہے نوجوان وکٹ کیپر بلے باز نے کہا کہ اگر ماہی کریز پر موجود ہیں تو آپ کو پتہ رہتا ہے کہ حالات قابو میں ہیں۔ ان کے دماغ میں منصوبہ بندی رہتی ہے جس پر ہمیں صرف عمل کرنا ہوتا ہے۔