ٹیسٹ کے لئے گیند بازوں کو کم از کم آٹھ سے 12 ہفتے تیاری کرنے کی ضرورت: آئی سی سی

کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں کھیل سرگرمیاں ٹھپ پڑی ہوئی ہیں۔ لیکن کچھ ممالک نے لاک ڈاؤن میں نرمی دینی شروع کر دی ہے جس کے بعد کھیل دوبارہ شروع کرنے پر غور ہو رہا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

دبئی، 23 مئی (یو این آئی) بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے کہا ہے کہ ٹیسٹ کرکٹ شروع ہونے پر گیند بازوں کو زخمی ہونے سے بچنے کے لئے دو ماہ تیاری کرنے کی ضرورت پڑے گی۔ کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں کھیل سرگرمیاں ٹھپ پڑی ہوئی ہیں۔ لیکن کچھ ممالک نے لاک ڈاؤن میں نرمی دینی شروع کر دی ہے جس کے بعد کھیل دوبارہ شروع کرنے پر غور ہو رہا ہے۔

آئی سی سی نے کورونا کی وجہ سے ملتوی پڑے کرکٹ کو دوبارہ پٹری پر لانے کے لئے ہدایات جاری کی ہیں اور اپنے رکن ممالک کو ان پرعمل کرنے کے لئے کہا ہے۔ آئی سی سی ہدایات کا مقصد کرکٹ کو تمام سطحوں کمیونٹی، گھریلو اور بین الاقوامی سطح پر شروع کرنا ہے۔

عالمی ادارے نے کہا کہ طویل وقت سے کھیل ٹھپ ہونے کے بعد کرکٹ دوبارہ شروع ہونے پر گیند بازوں کے زخمی ہونے کا زیادہ خطرہ ہے۔ آئی سی سی نے ٹیموں سے دورے پر بڑا دستہ بھیجنے اور گیند بازوں پر احتیاط برتنے کے لئے کہا ہے۔ آئی سی سی نے کہا کہ ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے کے لئے گیند بازوں کو کم از کم آٹھ سے 12 ہفتے تیاری کرنے کی ضرورت ہے۔عالمی ادارے کے مطابق ون ڈے اور ٹی -20 کے لئے گیند بازوں کو چھ ہفتے تیاری کرنی ہوگی۔

next