’ایس بی انرجی ہولڈنگز‘ گوتم اڈانی کے نام، 3.5 بلین ڈالر میں ہوئی خریداری

اڈانی گرین انرجی لمیٹڈ نے ایس بی انرجی ہولڈنگز لمیٹڈ کے حصول کا عمل مکمل کر لیا ہے، یہ معاہدہ 3.5 بلین ڈالر میں کیا گیا تھا، اس کے لیے دونوں کمپنیوں نے 18 مئی 2021 کو ایک معاہدہ کیا تھا۔

گوتم اڈانی، تصویر آئی اے این ایس
گوتم اڈانی، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

نئی دہلی: صنعتکار گوتم اڈانی نے سبز توانائی کی شعبہ میں اپنی موجودگی کو مستحکم کرتے ہوئے ایس بی انرجی ہولڈنگز انڈیا کا 100 فیصد حصہ 3.5 بلین ڈالر میں خرید لیا ہے جس سے ان کی کمپنی کی آپریشنل کارکردگی میں 46 فیصد اضافہ ہوگیا ہے۔ گوتم اڈانی کی گروپ کمپنی اڈانی گرین انرجی لمیٹڈ (اے جی ای ایل) نے ایس بی انرجی ہولڈنگز لمیٹڈ کے حصول کا عمل مکمل کر لیا ہے۔ یہ معاہدہ 3.5 بلین ڈالر (26000 کروڑ روپے) میں کیا گیا تھا۔ اس کے لیے دونوں کمپنیوں نے 18 مئی 2021 کو ایک معاہدہ کیا تھا۔ یہ ہندوستان کے قابل تجدید توانائی کے شعبہ میں اب تک کا سب سے بڑا سودا ہے۔ اب یہ کمپنی اے جی ای ایل کی اکائی بن گئی ہے۔

اس سے قبل سافٹ بینک گروپ اور بھارتی گروپ ایس بی انرجی میں بالترتیب 80 فیصد اور 20 فیصد حصہ رکھتے تھے۔ اس سے قبل ایس بی انرجی کینیڈین پنشن پلان انویسٹمنٹ بورڈ کے ساتھ بات چیت کر رہی تھی لیکن کچھ اختلافات کی وجہ سے یہ معاہدہ مکمل نہیں ہو سکا۔ اس کے بعد اڈانی گروپ نے اس کے لیے عمل شروع کیا۔


گوتم اڈانی نے حال ہی میں اعلان کیا کہ ان کا گروپ اگلے 10 سالوں میں قابل تجدید توانائی میں 20 بلین ڈالر کی سرمایہ کاری کرنے والا ہے۔ اے جی ای ایل کے منیجنگ ڈائریکٹر اور سی ای او ونیت ایس جین نے بتایا کہ اس معاہدے نے ان کی کمپنی کو قابل تجدید توانائی کے میدان میں دنیا کی سب سے بڑی کمپنی بننے کے قریب پہنچا دیا ہے۔ اس کمپنی کے حصول سے متعدد شعبوں میں روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے اور اڈانی گرین کی صلاحیت میں 5 گیگاواٹ کا اضافہ ہوگا۔ کمپنی کے پورٹ فولیو میں سولر، ونڈ اور سولر ونڈ ہائبرڈ منصوبے شامل ہیں۔ ان میں سے 1700 میگاواٹ کے منصوبے چل رہے ہیں جبکہ باقی پر کام جاری ہے۔ اے جی ای ایل کی کل صلاحیت 19.8 گیگاواٹ تک بڑھ گئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔