سندھو عالمی چمپئن شپ میں سونے کا تمغہ جیتنے والی پہلی ہندوستانی کھلاڑی بنیں

سندھو کا عالمی چمپئن شپ میں یہ پانچواں تمغہ ہے۔ اس سے پہلے وہ 2 چاندی اور 2 کانسی کے تمغے جیت چکی ہیں۔ پانچویں سیڈ سندھو نے تیسری سیڈ اوكهارا کو 37 منٹ میں شکست دے کر ہندوستان میں جشن کی لہر دوڑا دی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

باسل: ہندوستان کی پی وی سندھو نے جاپان کی نوجومی اوكهارا کو اتوار کو یک طرفہ مقابلے میں 21-7، 21-7 سے شکست دے کر ورلڈ بیڈمنٹن چمپئن شپ میں طلائی تمغہ جیت کر نئی تاریخ رقم کی۔ سندھو عالمی چمپئن شپ میں سونے کا تمغہ جیتنے والی پہلی ہندوستانی کھلاڑی بن گئی ہیں۔

سندھو عالمی چمپئن شپ میں سونے کا تمغہ جیتنے والی پہلی ہندوستانی کھلاڑی بنیں

سندھو نے بڑے ٹورنامنٹوں کے فائنل میں ہارنے کا تعطل آخر آج توڑ دیا اور وہ ہندوستان کی بیڈمنٹن میں پہلی عالمی چمپئن بن گئیں۔ سندھو گزشتہ دو سال عالمی چمپئن شپ کے فائنل میں ہاری تھیں لیکن اس بار انہوں نے کوئی غلطی نہیں کی اور زبردست مظاہرہ کرتے ہوئے اوكهارا کو شکست سے دو چار کر دیا۔

اولمپک سلور فاتح سندھو کا عالمی چمپئن شپ میں یہ پانچواں تمغہ ہے۔ وہ اس سے پہلے دو چاندی اور دو کانسی کے تمغے جیت چکی ہیں۔ پانچویں سیڈ سندھو نے تیسری سیڈ اوكهارا کو 37 منٹ میں شکست دے کر ہندوستان میں جشن کی لہر دوڑا دی۔

سندھو کو 2016 کے ریو اولمپکس میں چاندی، 2017 کی عالمی چمپئن شپ میں چاندی، 2018 کے دولت مشترکہ کھیلوں میں چاندی اور 2018 کی عالمی چمپئن شپ میں بھی چاندی کا تمغہ ملا تھا لیکن انہوں نے اس وقت اپنے میڈل کا رنگ بدلتے ہوئے اسے پیلا کر دیا۔

سندھو کا 2019 میں یہ پہلا خطاب ہے اور یہ خطاب بھی انہیں عالمی چمپئن شپ میں ملا جس کا ہندوستان کو کئی سالوں سے انتظار تھا۔ سندھو نے فائنل میں جو مظاہرہ کیا وہ بے مثال تھا اور اس کارکردگی کو طویل عرصے تک یاد رکھا جائے گا۔

اوكهارا جیسی کھلاڑی کو دونوں گیمز میں 21-7، 21-7 سے شکست دے کر سندھو نے ثابت کیا کہ وہ اگلے سال ہونے والے ٹوکیو اولمپکس میں طلائی تمغہ کی سب سے مضبوط دعویدار رہیں گی۔ سندھو نے عالمی رینکنگ میں چوتھے نمبر کی کھلاڑی اوكهارا کے خلاف اپنا کیریئر ریکارڈ 9-7 کر لیا ہے۔

اولمپک سلور فاتح سندھو نے کوارٹر فائنل میں دنیا کی دوسرے نمبر کی کھلاڑی تائی پے کی تائی جو ینگ کو، سیمی فائنل میں عالمی رینکنگ میں تیسرے نمبر کی کھلاڑی چین کی یو فئی کو فائنل میں عالمی رینکنگ میں چوتھے نمبر کی کھلاڑی اوكهارا کو شکست دی۔

سندھو کا اس سال یہ دوسرا اور عالمی چمپئن شپ میں مسلسل تیسرا فائنل تھا۔ وہ اس سال اس سے پہلے انڈونیشیا اوپن کے فائنل میں پہنچیں تھیں۔ سندھو نے گزشتہ سال عالمی چمپئن شپ میں اور ورلڈ ٹور فائنلس میں بھی اوكهارا کو شکست دی تھی۔