فرانس، ایک ہی گھر سے 100 مردہ بلیاں برآمد

جانوروں کے تحفظ کی انجمنوں کے مطابق جنوبی فرانس میں ایک ریٹائرڈ شخص کے گھر سے لگ بھگ 100 مردہ بلیاں برآمد ہوئیں ہیں۔

فرانس، ایک ہی گھر سے 100 مردہ بلیاں برآمد
فرانس، ایک ہی گھر سے 100 مردہ بلیاں برآمد
user

Dw

جانوروں کے حقوق کے لیے کام کرنے والے رضاکاروں کو ایک 81 سالہ بوڑھے شخص کی بھانجی نے اس وقت مطلع کیا، جب وہ اتوار کو اس کے گھر میں داخل ہوئی۔ اتوار کے روز بوڑھے شخص کو شہر نیس کے ایک ہسپتال لے جایا گیا، جس کے بعد یہ رشتہ دار لڑکی ریٹائرڈ شخص کے گھر گئی تھی۔ یہ لڑکی گھر میں داخل ہوئی تو زیادہ تر جانور ہلاک ہو چکے تھے۔ نیس کے مقامی اخبار کے مطابق زیادہ تر بلیوں کو پلاسٹک یا پھر لکڑی کے ڈبوں میں سیل کر کے رکھا گیا تھا۔

دیگر جانوروں کی باقیات بھی

جانوروں کے حقوق کے لیے کام کرنے والے رضاکاروں کو گھر کے اندر اور اردگرد پائی جانے والی مردہ بلیوں کے ساتھ ساتھ گلہریوں اور چوہوں کی باقیات جبکہ کتے کے جبڑے بھی ملے ہیں۔


گھر کے اندر سے 20 سے زائد ایسی بلیاں بھی ملی ہیں، جو شدید غذائی قلت کا شکار تھیں۔ ان لاغر بلیوں کو جانوروں کے ڈاکٹروں کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ جانوروں کی دیکھ بھال کرنے والی ایک مقامی تنظیم کے سربراہ فیلپے دیجاکگل کا کہنا تھا، ''ایسا لگتا ہے کہ بلیاں ڈبوں میں رکھنے سے پہلے ہی مر چکی ہیں اور انہیں مرنے کے بعد ڈبوں میں پیک کیا گیا۔ لیکن دو بلیوں کے بارے میں لگتا ہے کہ انہیں زندہ ڈبوں میں بند کر دیا گیا تھا۔‘‘

ایک کمرے کے صوفے پر ایک بلی کی کٹی پھٹی باقیات بھی ملی ہیں، جس کے کچھ اعضاء کو شاید دوسری بلیوں نےکھا لیا تھا۔ فیلپے دیجاکگل کے مطابق شاید یہ بوڑھا شخص نوحا سینڈروم میں مبتلا تھا۔ اس سینڈروم میں مبتلا افراد تنہائی کی وجہ سے بڑی تعداد میں جانور رکھ لیتے ہیں لیکن ان کی دیکھ بھال یا ضروریات پوری کرنے کے قابل نہیں ہوتے۔


نوحا سینڈروم ڈائیوجینس سینڈروم کا ہی ایک حصہ ہے، جو لوگوں کو اشیاء ذخیرہ کرنے کی عادت ڈالتا ہے۔ حکام نے جانوروں کے ساتھ نامناسب سلوک کرنے کی وجہ سے اس عمر رسیدہ شخص کے خلاف مجرمانہ نوعیت کا مقدمہ درج کرنے کا عندیہ دیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔