ایلن مسک کے ’اسپیس ایکس‘ کا کارنامہ، پہلی بار چار عام شہریوں کو کرائی خلا کی سیر

ناسا نے ایک ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ ’’مبارک ہو، انسپریشن 4، پہلی اسپیس فلائٹ کے لیے ناسا کینیڈی سے لانچ پیڈ دستیاب کرانے پر فخر ہے، اسپیس ایکس پانچ گھنٹے کی لانچ وِنڈو کو ہدف بنا رہا ہے۔‘‘

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

ٹیک ارب پتی ایلن مسک کے اسپیس ایکس کے ذریعہ چلنے والے ’انسپریشن 4‘ نے جمعرات کو آربٹ میں اپنا پہلا آل سویلین مشن لانچ کیا ہے۔ اسپیس ایکس کے چیرٹی سے چلنے والے مشن ’انسپریشن 4‘ نے رات 8.02 بجے پرواز بھری۔ اس کی کمان ٹیک صنعت کار جیریڈ ایساک مین نے سنبھالی ہے اور اس کے ساتھ میڈیکل افسر ہیلی آرسیناکس، جینٹ جوڈ چلڈرن ریسرچ ہاسپیٹل میں ایک طبی معاون اور چائلڈ میڈیکل کینسر، مشن ماہر کرس سیمبروسکی، فضائیہ کے تجربہ کار اور ائیرو اسپیس ڈاٹا انجینئر، اور مشن پائلٹ ڈاکٹر سیان پراکٹر، ایک اراضی سائنسداں، صنعت کار اور تربیت یافتہ پائلٹ نے ٹیم جوائن کی ہے۔

’انسپریشن 4 ایک‘ کو ٹیگ کرتے ہوئے اسپیس ایکس نے ایک ٹوئٹ میں شیئر کیا کہ ’’انسپریشن 4 کا لفٹ آف۔ فالکن 9 گو۔ ڈریگن گو۔‘‘ ناسا نے ایک ٹوئٹ میں لکھا ہے ’’مبارک ہو، انسپریشن 4، پہلی اسپیس فلائٹ کے لیے ناسا کینیڈی سے لانچ پیڈ دستیاب کرانے پر فخر ہے۔‘‘ اسپیس ایکس پانچ گھنٹے کی لانچ ونڈو کو ہدف بنا رہا ہے۔‘‘


پائلٹ ٹیم ہر 90 منٹ میں ایک متوازن پرواز راہ کے ساتھ اسپیس ایکس کے کرو ڈریگن کیپسول میں دنیا کا چکر لگائے گا۔ ہبل اسپیس ٹیلی اسکوپ مرمت مشن کے بعد سے تین روزہ مشن تقریباً 575 کلو میٹر کے آربٹ کو ہدف بنائے گا، جو کسی بھی انسانی خلائی طیارہ کے مقابلے میں زمین سے زیادہ دور تک پرواز بھرے گا۔ تین روزہ سفر کے اختتام پر ڈریگن اور انسپریشن 4 پائلٹ ٹیم فلوریڈا کے ساحل سے زمین کی فضا میں پھر سے داخل کریں گے۔

انسپریشن 4 ٹیم کے مطابق ڈریگن میں ایک گنبد دار کھڑکی ہے، جو بین الاقوامی خلائی اسٹیشن پر کپولا سے متاثر ہے، اور پائلٹ ٹیم کو زمین کے حیرت انگیز مناظر دکھائے گی۔ انسپریشن 4 مشن اسپیس ایکس کے جدید نجی خلائی مسافر مشن کو نشان زد کرتا ہے۔


ناسا کے سربراہ بل نیلسن نے ٹوئٹ کر کے بتایا ہے کہ ’’انسپریشن 4 لانچ ہمیں یاد دلاتا ہے کہ جب ہم نجی صنعت کے ساتھ شراکت داری کرتے ہیں تو کیا حاصل کیا جا سکتا ہے۔ نجی مشنوں کو پرواز کے کمرشیل صلاحیت کمرشیل کرو کے ساتھ ناسا کے ویژن کا اظہار ہے۔‘‘

لانچ سے قبل سی ای او ایلن مسک نے پائلٹ ٹیم سے ملاقات کی۔ بعد ازاں انسپریشن 4 نے ٹوئٹ کیا کہ ’’لانچ کمپلیکس 39 اے کے لیے روانہ ہونے سے پہلے ہمارے ہیش ٹیگ انسپریشن 4 کرو میں آنے کے لئے شکریہ۔‘‘ انسپریشن 4 کا ہدف انسانیت کو ترغیب دلانا اور سینٹ جوڈ چلڈرن ریسرچ ہاسپیٹل کے لیے رقم اکٹھا کرنا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔