پی ایس ایل وی۔ سی 52 مشن کامیاب، سری ہری کوٹہ سے سٹلائیٹس کو چھوڑا گیا

صدر نشین اسرو نے اس مشن کی کامیابی کے بعد کہا کہ یہ مشن کامیاب رہا اور سٹلائیٹس مدار میں داخل کر دیئے گئے ہیں۔ انہوں نے اس مشن کی کامیابی کے لئے کام کرنے والے تمام افراد کو مبارکباد پیش کی۔

تصویر یو این آئی
تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

حیدرآباد: نئے سال میں پہلے اور اسرو کے نئے صدر نشین ایس سومناتھ کی قیادت میں پہلے مشن کے حصہ کے طور پر زمین کے مشاہداتی سٹلائیٹ ای او ایس۔ 04 اور دیگر دو چھوٹے سٹلائیٹس کو، آندھراپردیش کے سری ہری کوٹہ سے کامیابی کے ساتھ مدار میں چھوڑا گیا۔ ان سٹلائٹس کو چھوڑے جانے کے لئے الٹی گنتی کا عمل تقریبا 25 گھنٹے اور 30 منٹ تک جاری رہا۔ 44.4 میٹر اونچی چار مرحلوں والی خلائی گاڑی 1710 کیلوگرام ای او ایس۔04 اور دو سٹلائٹس کو تقریباً 25 گھنٹوں کی الٹی گنتی کے ختم ہونے کے بعد صبح 5.59 منٹ پر پہلے لانچ پیڈ کے ذریعہ چھوڑا گیا۔

اس کو چھوڑے جانے کے بعد ای او ایس۔ 04 خلائی گاڑی سے علحدہ ہوگئے۔ تقریباً 100 سکنڈس بعد دو معاون مسافر سٹلائیٹس بھی علحدہ ہوکرصبح 6.17 بجے مدار میں داخل ہوگئے۔ اسرو نے ٹوئٹ کرتے ہوئے یہ اطلاع دی۔ ان دو چھوٹے سٹلائیٹس میں ایک طلبہ کا بھی سٹلائیٹ ہے۔ یہ سٹلائیٹ انڈین انسٹی ٹیوٹ آف اسپیس اینڈ سائنس اینڈ ٹکنالوجی کے طلبہ کی جانب سے لیبارٹری آف اٹماسفیر اینڈ اسپیس فزکس، یونیورسٹی آف بولڈر کے اشتراک سے تیار کیا گیا ہے، جبکہ دوسرا سٹلائیٹ اسرو کا ٹیکنالوجی کے مظاہرہ والا سٹلائیٹ ہے جو ہند۔بھوٹان مشترکہ سٹلائیٹ کا پیش خیمہ ہے۔


ای او ایس۔ 04 کی زندگی دس سال کی ہوگی۔ یہ راڈار امیجنگ سٹلائیٹ ہوگا جس کے ذریعہ اعلی معیاری تصاویر تمام موسمی حالات کے لئے حاصل ہوں گی۔ مشن کنٹرول روم میں خوشی کے مناظر کے درمیان لانچ ڈائریکٹر نے اعلان کیا کہ تین سٹلائیٹس کامیابی کے ساتھ اپنی جگہ نصب ہوگئے ہیں۔ اسرو کے سربراہ سومناتھ نے کہا کہ مشن پی ایس ایل وی۔ سی 52 کامیاب رہا۔ یہ اسرو کا سال 2022 کا پہلا لانچ ہے۔ جاریہ سال اسرو 18 دیگر مشنس رکھتا ہے۔ اس میں ہائی پروفائل چندریان 3 اور گگن یان مشن بھی شامل ہے۔ گگن یان مشن کا تمام کو بے چینی سے انتظار ہے۔ جاریہ سال کا یہ پہلا سٹلائیٹ، جی ایس ایل وی۔ ایف 10/EOS-03مشن کی ناکامی کے بعد چھوڑا گیا ہےجس کے بعد سائنسدانوں نے ایک دوسرے کومبارکباد پیش کی۔

صدر نشین اسرو نے اس مشن کی کامیابی کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ مشن کامیاب رہا اور سٹلائیٹس مدار میں داخل کر دیئے گئے ہیں۔ انہوں نے اس مشن کی کامیابی کے لئے کام کرنے والے تمام افراد کو مبارکباد پیش کی۔ مشن ڈائریکٹر نے کہا کہ یہ اسرو کی ٹیم کے ہر رکن کی بے لوث اور سنجیدہ مساعی کی وجہ سے ممکن ہوسکا۔ انہوں نے تکنیکی، انتظامی ٹیموں اور سٹلائیٹ ٹیم کے ساتھ ساتھ سینئرس کو اس مشن کی رہنمائی کے سلسلہ میں مبارکباد پیش کی۔ سٹلائیٹ ڈائریکٹر سریکانت نے بھی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے تمام کو مبارکباد پیش کی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔