فضائی آلودگی ختم کرنے کے لیے ’آئی آئی ٹی دہلی‘ کمربستہ، تحقیق شروع

ملک میں فضائی آلودگی کو دور کرنے کے لئے انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی (آئی آئی ٹی) نے تحقیق کے شعبہ میں کئی اقدام کئے ہیں اور اسٹارٹ اپ منصوبے شروع کئے ہیں

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

یو این آئی

نئی دہلی: ملک میں فضائی آلودگی کو دور کرنے کے لئے انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی (آئی آئی ٹی) نے تحقیق کے شعبہ میں کئی اقدام کئے ہیں اور اسٹارٹ اپ منصوبے شروع کئے ہیں۔

گزشتہ فروری میں قائم صاف ہوا پر تحقیقی مرکز نے فضائی آلودگی کو کم کرنے کے لئے جاپان اور چین جیسے ممالک میں اس شعبہ میں کئے گئے اقدام کا مطالعہ شروع کیا ہے تاکہ پالیسی تشکیل دینے ، گورننس اور عمل درآمد میں مدد مل سکیں۔ اس کے علاوہ ادارہ قومی علاقے میں پی ایم 2.5 ذرات کی سطح پہلے ہی پتہ لگانے کی تکنیک کا بھی مطالعہ کررہاہے۔

آئی آئی ٹی نے پنجاب اور ہریانہ ریاستوں میں اکتوبر۔نومبر میں پرالی جلانے کے واقعہ سے آلودگی کے اثر ات کا مطالعہ کر کے اپنی آخری رپورٹ نیتی آیوگ، پنجاب حکومت اور ماحولیات اور آب و ہوا کی تبدیلی کی وزارت کو سونپ دی ہے۔

اس کے علاوہ اینٹوں کے بھٹوں سے ہونے والی آلوددگی کا بھی مطالعہ کیا جارہا ہے جو قومی راجدھانی علاقوں میں آلودگی پھیلانے کی اہم وجوہات میں شامل ہے۔ ساتھ ہی قومی راجدھانی سے 100 کلومیٹر دور تک کے کوئلہ پر مبنی تھرمل پاور سے ہونےو الی آلودگی کا بھی مطالعہ کیا جارہا ہے۔ اس کے علاوہ دہلی کی بسوں پر آلودگی سینسر لگانے کا جائزہ لیا جارہا ہے تاکہ مختلف علاقوں میں آلودگی کی سطح کو ماپا جاسکے اور اس پر مناسب کارروائی کی جاسکے۔

Published: 5 Nov 2019, 6:08 PM