نظم... نئی روشنی

یومِ آزادی کے موقع پر پیش ہے ام ماریہ حق کی نظم ’نئی روشنی‘۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

ام ماریہ حق

چلو!

نئی روشنی کے ہمراہ

عزم لیں

اپنے وطن کی

ستم زدہ دھرتی کو

اب اور زخم نہ دیں گے

چلو!

محبتوں کی وہ ٹوٹی ہوئی کشتیاں

اب ایک بار پھر سے جوڑیں

جو نفرتوں کی آندھیوں سے

ٹکرا ٹکرا کر

بکھر گئیں ہیں

چلو!

ہمت کا پرچم لے کر

موڑ دیں ان کشتیوں کا رخ

محبت کے اس سمندر کی جانب

جس کے سینے پر

سکون و اطمینان کے

آس کے

مسرت کے

سارے تودے

برف کی شکل میں

ساکت جمے ہیں