پاکستان میں بلیک آؤٹ ، بریک ڈاؤن کی وجہ سے چاروں طرف رہی تاریکی

پاکستان کے وفاقی وزیر برائے پانی و بجلی عمر ایوب خان نے ٹوئٹر پر بتایا کہ بجلی کے ترسیلی نظام میں فریکوئینسی اچانک 50 سے صفر پر آنے کی وجہ سے ملک میں بجلی کا بلیک آؤٹ ہے۔

تصویر  بشکریہ پاکستانی وزارت توانائی ٹویٹر ہینڈل 
تصویر بشکریہ پاکستانی وزارت توانائی ٹویٹر ہینڈل
user

قومی آوازبیورو

ہفتہ کے روزپاکستان میں بجلی کا زبردست بریک ڈاؤن ہوا جس کی وجہ پاکستان کا ایک بڑا حصہ تاریکی میں ڈوب گیا جس کی وجہ سے سوشل میڈیا بھی تقریبا غیر متحرک ہو گیا۔ پاکستان کا دارالحکومت بھی تاریکی میں ڈوبا رہا جبکہ اب بحالی کا عمل شروع ہو گیا ہے۔ ابھی کن علاقوں میں بجلی بحال ہو چکی ہے اس کی تصدیق نہیں ہو رہی ہے۔

واضح رہے پاکستان کی جتنی بھی صوبائی راجدھانیاں ہیں وہ اس بریک ڈاؤن سے متاثر رہیں جن میں کراچی، پشاور، لاہور، پنڈی، اسلام آباد ، ملتان وغیرہ شامل ہیں۔وزارتِ توانائی کی جانب سے بتایا گیا کہ 11 بج کر 41 منٹ پر گڈو بجلی گھر میں فنی خرابی پیدا ہوئی ہے جس کی وجہ سے ملک کی ہائی ٹرانسمیشن لائن ٹرپ ہو گئیں۔گڈو تھرمل پاور سٹیشن سندھ کے ضلع کشمور میں دریائے سندھ کے کنارے پر واقع ہے اور اس کا شمار پاکستان کے بڑے بجلی گھروں میں ہوتا ہے۔

پاکستان کے وفاقی وزیر برائے پانی و بجلی عمر ایوب خان نے ٹوئٹر پر بتایا کہ بجلی کے ترسیلی نظام میں فریکوئینسی اچانک 50 سے صفر پر آنے کی وجہ سے ملک میں بجلی کا بلیک آؤٹ ہے۔انھوں نے بتایا کہ فریکوئینسی اچانک گرنے کی وجہ جاننے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

بریک ڈاؤن کی خبر کے بعد شروع میں تو سوشل میڈیا پر رد عمل آئے لیکن بعد میں لوگ بجلی نہ ہونے کی وجہ سےسوشل میڈیا سے غائب نظر آئے ۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next