تحریک لبیک پاکستان کے امیر خادم حسین رضوی انتقال کر گئے

دینی و سیاسی جماعت تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی لاہور کے مقامی ہسپتال میں انتقال کر گئے

بشکریہ العربیہ اردو
بشکریہ العربیہ اردو
user

قومی آوازبیورو

اسلام آباد: دینی و سیاسی جماعت تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی لاہور کے مقامی ہسپتال میں انتقال کر گئے۔ خاندانی ذائع نے ان کی موت کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ خادم حسین رضوی کو گزشتہ چند روز سے بخار تھا اور جمعرات کو جب حالت زیادہ خراب ہوئی تو پہلے انہیں شیخ زاید ہسپتال منتقل کیا گیا مگر حالت زیادہ بگڑنے پر انہیں پرائیویٹ ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ان کا انتقال ہو گیا۔

خاندانی ذرائع نے مزید بتایا کہ اسلام آباد دھرنے کے دوران انہیں بخار ہو گیا جو دن بدن بڑھتا گیا تو وہ گھر آ گئے اور اب ان کا انتقال ہوگیا ہے۔ ٹی ایل پی کے دوسرے گروپ کے سربراہ آصف جلالی نے خادم حسین رضوی کے انتقال پر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ خادم حسین رضوی چوک یتیم خانہ لاہور میں اپنے گھر میں انتقال کر گئے۔


تحریک لبیک پاکستان نے چند روز قبل فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف اسلام آباد میں فیض آباد انٹر چینج پر دھرنا دیا تھا جس کی قیادت علامہ خادم حسین رضوی نے کی تھی۔ تاہم حکومتی ٹیم سے کامیاب مذاکرات کے بعد دھرنا ختم کر دیا گیا تھا۔ اس سے قبل 12 نومبر کو لاہور کی انسداد دہشت گردی عدالت نے اشتعال انگیز تقاریر اور احتجاجی مظاہروں میں سرکاری املاک کی توڑ پھوڑ سے متعلق کیس میں خادم حسین رضوی سمیت 26 ملزمان پر فرد جرم عائد کی گئی تھی۔

خادم حسین رضوی 22 جون 1966 کو نکہ توت ضلع اٹک میں حاجی لعل خان کے ہاں پیدا ہوئے۔ انہوں نے جہلم ودینہ کے مدارس دینیہ سے حفظ و تجوید کی تعلیم حاصل کی جس کے بعد لاہور میں جامعہ نظامیہ رضویہ سے درس نظامی کی تکمیل کی۔ انہوں قران پاک حفظ کیا ہوا تھا۔


خادم حسین عربی اور اردو کے علاوہ فارسی زبان پر بھی عبور رکھتے تھے۔ عرصہ قبل وہ سڑک حادثہ کا شکار ہوئے تھے اور معذور ہونے کی وجہ سے چل نہیں سکتے تھے۔ پاکستان علما کونسل کے سربراہ علامہ طاہر محمود اشرفی نے علامہ خادم حسین رضوی کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے اسے سانحہ قرار دیا ہے۔

بشکریہ العربیہ اردو

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔