پاکستان میں کشمیر پر اعلیٰ سطحی میٹنگ، آگے کی حکمت عملی کی تیاری!

پاکستانی حکومت نے آج کشمیر ایشو پر ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ طلب کی ہے۔ تصور کیا جا رہا ہے کہ اس میٹنگ میں حکومت پاکستان کشمیر معاملے میں آگے کی پالیسی طے کرے گی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

جموں و کشمیر ایشو پر پاکستان کو ہر طرف سے مایوسی ہاتھ لگی ہے۔ اقوام متحدہ سیکورٹی کونسل سے بھی پاکستان کو خالی ہاتھ ہی لوٹنا پڑا۔ ہر طرف سے ملی شکست سے بوکھلائی پاکستانی حکومت نے آج کشمیر ایشو پر ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ طلب کی ہے۔ مانا جا رہا ہے کہ اس میٹنگ میں حکومت پاکستان کشمیر معاملے میں آگے کی پالیسی طے کرے گا۔ اس میٹنگ میں پاکستان یہ طے کرے گا کہ وہ ہندوستان کے خلاف کیا قدم اٹھا سکتا ہے۔ ایسے ماحول میں اس میٹنگ پر ہندوستان کی بھی خاص نظر رہے گی۔

پاکستان کشمیر ایشو پر پوری دنیا سے مداخلت کرنے کا مطالبہ کر رہا ہے، لیکن ابھی تک چین کو چھوڑ کر کسی بھی ملک نے اس کا ساتھ نہیں دیا ہے۔ اس ایشو کو پاکستان چین کی مدد سے سیکورٹی کونسل کی دہلیز پر لے جانے میں کامیاب تو ہو گیا لیکن وہاں بھی اسے مایوسی ہی ہاتھ لگی۔ پاکستان کی فریاد کو نظر انداز کرتے ہوئے سیکورٹی کونسل نے کشمیر ایشو پر اپنے دروازے بند کر لیے ہیں۔ ایسے میں ہندوستان کے لیے یہ میٹنگ سیاسی اور سفارتی نظریہ سے کافی اہم ہے۔ ہندوستان سمیت دنیا کے دیگر ملک اس پر نظر بنائے ہوئے ہیں کہ آخر اب کشمیر معاملے میں پاکستان کا کیا اسٹینڈ ہوگا۔


اس میٹنگ کے بارے میں پاکستان کے وزیر خارجہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ اس میں کشمیر ایشو پر مستقبل کے منصوبے پر غور ہوگا۔ اس میں پاکستان کشمیر معاملے میں اپنی آگے کی پالیسی تیار کرے گا۔ اس میٹنگ کو اس لیے بھی اہم مانا جا رہا ہے کیونکہ اس میں سیاسی پارٹیوں کے ساتھ پاکستان کی اہم تنظیموں کو بھی مدعو کیا گیا ہے تاکہ وہ اپنی رائے رکھ سکیں۔ پاکستانی وزیر خارجہ نے کہا کہ اس میٹنگ میں کشمیر کے لوگوں کی مدد اور حمایت کے لیے قدم اٹھائے جا سکتے ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 17 Aug 2019, 5:10 PM