پاکستان: کوئٹہ کے چار ستارہ ہوٹل میں دھماکہ، چار کی موت، 12 زخمی

پاکستان کے بلوچستان صوبے کی راجدھانی کوئٹہ میں ایک چار ستارہ ہوٹل میں دھماکہ سے ایک پولیس افسر سمیت چار لوگوں کی موت اور 12 دیگر زخمی ہو گئے

تصویر العربیہ ڈاٹ نیٹ
تصویر العربیہ ڈاٹ نیٹ
user

قومی آوازبیورو

اسلام آباد: پاکستان کے کوئٹہ میں ایک چار ستارہ ہوٹل میں دھماکہ سے ایک پولیس افسر سمیت چار لوگوں کی موت اور 12 دیگر زخمی ہو گئے۔ بلوچستان رقبے کے اعتبار سے پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ ہے، جہاں کے دارالحکومت کوئٹہ میں سیرینا ہوٹل کے باہر یہ دھماکہ پیش آیا۔

صوبائی حکام کے مطابق بدھ کی شب قریباً سوا دس بجے کوئٹہ میں شاہراہ زرغون پر واقع چار ستارہ سیرینا ہوٹل کی پارکنگ لاٹ میں دھماکہ ہوا ہے۔ کوئٹہ کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل پولیس اظہر اکرام نے ابتدائی تحقیقات کے حوالے سے بتایا ہے کہ دھماکہ خیز ڈیوائس ایک گاڑی میں نصب کی گئی تھی۔ دھماکے سے ایک پولیس افسر اور ہوٹل کا ایک حفاظتی گارڈ سمیت چار لوگوں کی موت ہو گئی جبکہ 12 دیگر زخمی ہوئے ہیں۔ دھماکہ سے بہت سی گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا ہے۔


پاکستان کے روزنامہ ڈان نے پولیس سپرنٹندنٹ طاہر رائے کے حوالے سے بتایا کہ دھماکے کے بعد ہوٹل کا محاصرہ کر لیا گیا اور انسداد دہشت گردی دستے کو واقعہ کی جانچ کے احکام دیئے ہیں۔ زخمیوں کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔

سوشل میڈیا پر دھماکے کے بعد فوٹیج شیئر کی گئی ہے، اس میں آگ کے شعلے اور دھویں کے بادل آسمان کی جانب بلند ہوتے دیکھے جاسکتے ہیں اور پارکنگ میں کھڑی کئی گاڑیوں کوآگ لگی ہوئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔