افغانستان میں جنگ بندی کی مدت میں مزید ایک ہفتہ کا اضافہ

خبررساں ایجنسی پجووک نے حکومت اور دہشت گرد تنظیم طالبان کے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ طرفین جنگ بندی کے بعد ملک میں تشدد کو کم کرنا چاہتے ہیں۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

کابل: افغانستان میں عید الفطر کے موقع پر تین دن کی جنگ بندی کے بعد تازہ رپورٹوں کے مطابق جنگ بندی اب مزید ایک ہفتے تک کے لئے بڑھا دی گئی ہے۔ افغان خبررساں ایجنسی نے پیر کو یہ اطلاع دی۔ خبررساں ایجنسی پجووک نے حکومت اور دہشت گرد تنظیم طالبان کے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ طرفین جنگ بندی کے بعد ملک میں تشدد کو کم کرنا چاہتے ہیں۔

طالبان نے دراصل عید کے موقع پر اتوار کو تین دن کے لئے جنگ بندی کا اعلان کیا تھا جس کے بعد افغانستان کے صدر اشرف غنی نے اس اقدام کا خیر مقدم کرتے ہوئے اعلان کیا تھا کہ طالبان قیدیوں کو رہا کرنے کے عمل میں تیزی لائی جائے گی اور جنگ بندی کے اعلان کے بدلے ایک مثبت اشارہ کے طور پر دو ہزار طالبان قیدیوں کو رہا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ قابل غور ہے کہ اس سال 29 فروری کو قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امریکہ اور طالبان کے قیدیوں کو رہا کرنے اور قیام امن کے حوالہ سے معاہدہ ہوا تھا۔