برکس کانفرنس میں شی جن پنگ کا محافظ کے لئے دروازہ بند ، ویڈیو میں چینی صدر دیکھتے رہ گئے

بدھ کو جب چینی صدرشی جن پنگ برکس کے ریڈ کارپٹ پر پہنچے توان کے ایک معاون کو وہاں تعینات سکیورٹی افسران نے روک دیا۔ اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے۔

<div class="paragraphs"><p>تصویر بشکریہ آئی اے این ایس</p></div>

تصویر بشکریہ آئی اے این ایس

user

قومی آوازبیورو

جنوبی افریقہ میں 15ویں برکس سربراہی کانفرنس کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ برکس ممالک کا سربراہی اجلاس دارالحکومت جوہانسبرگ میں ہیں۔ برکس کانفرنس میں چینی صدر شی جن پنگ بھی شرکت کر رہے ہیں۔ لیکن بدھ کو برکس سربراہی اجلاس کے دوران ایک عجیب واقعہ نے سب کی توجہ اپنی طرف کھینچ لی۔

بدھ کو جب صدر  شی جن پنگ برکس کے ریڈ کارپٹ پر پہنچے تو ان کے ایک معاون کو وہاں تعینات سکیورٹی افسران نے روک لیا۔ اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی ہے۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ شی جن پنگ برکس کانفرنس کے لیے بچھائے گئے ریڈ کارپٹ پر جا رہے ہیں۔ اس کے پیچھے ان کا  سکیورٹی اہلکار بھی آتا ہے لیکن جلد ہی وہاں تعینات سکیورٹی اہلکار اسے روک کر دروازہ بند کر دیتے ہیں۔


اس دوران شی جن پنگ نے کئی بار پیچھے مڑ کر دیکھا۔ اس دوران وہ الجھن کی حالت میں نظر آتے ہیں۔ وہ کئی بار رکتے ہیں اور پیچھے مڑ کر دیکھتے ہیں  کہ کیا ہو رہا ہے۔ دریں اثنا، دروازہ ہلتا ​​ہوا دیکھا جا سکتا ہے، جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ باہر کوئی  دھکا مکی ہو رہی ہے۔

اس دوران شی جن پنگ نے برکس کانفرنس سے بھی خطاب کیا۔ چینی صدر شی جن پنگ نے کہا کہ بین الاقوامی قوانین تمام ممالک کو مشترکہ طور پر اقوام متحدہ کے چارٹر کے مقاصد اور اصولوں کے مطابق لکھے جائیں نہ کہ صرف ایک مضبوط ملک کے کہنے پر۔ برکس ممالک کو ایک دوسرے کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر کھڑا ہونا چاہیے اور تفرقہ انگیز پالیسیوں سے دور رہنا چاہیے۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;