وَسطی امریکہ میں ڈینگو کا قہر، 124 افراد ہلاک، ہزاروں متاثر

اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ 8 اگست تک وسطی امریکہ میں ڈینگو کے تقریباً 1 لاکھ 27 ہزار معاملے سامنے آئے۔ اس بیماری سے سب سے زیادہ نو عمر اور بچے متاثر ہوئے ہیں۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

یو این آئی

وسطی امریکی ملک ہونڈوراس میں مچھر سے پیدا ہونے والی بیماری ڈینگو سے 8 اگست تک کم از کم 124 افراد کی موت ہوئی ہے۔ سرکاری ذرائع نے بدھ کو یہ اطلاع دی۔ اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ کے مطابق 8 اگست تک وسطی امریکہ میں ڈینگو کے 127000 معاملے سامنے آئے۔ ہونڈوراس میں اس بیماری سے سب سے زیادہ بچے اور نوعمر متاثر ہوئے ہیں اور کم از کم 124 افراد کی موت ہوگئی۔

سرکاری ذرائع کے مطابق وسطی امریکہ میں اقوام متحدہ اور انسانی تنظیمیں حکومت کو طبی سامان اور آلات کی دستیابی کے ساتھ ہی گھر گھر جا کر بیداری مہم اور کمیونٹی ہیلتھ مراکز کے لئے براہ راست تکنیکی مہمات میں مدد کر رہے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت (ڈبليو ایچ او) کی اس ہفتہ ملنے والی رپورٹ کے مطابق 27 جولائی تک ڈینگوکے 167607 معاملہ سامنے آئے جس سے 720افراد کی اس بیماری سے موت ہوئی۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حالیہ برسوں میں مچھر سے پیدا ہونے والی بیماری، ڈینگو، چكن گنيا، پیلے بخار اور ذیکا کے بڑے پیمانے پر معاملے دیکھے گئے ہیں۔

Published: 15 Aug 2019, 11:10 AM