احمد آباد: لڑکی سے چھیڑخانی کے بعد تشدد، کئی گاڑیاں نذرِ آتش

امباواڈی علاقے کے ایک ہوسٹل میں گزشتہ شب ایک لڑکے نے لڑکی سے چھیڑخانی کر دی۔ اس واقعہ کے بعد دونوں فریقین میں پہلے بحث ہوئی جس نے بعد میں تشدد کی شکل اختیار کر لی۔

By قومی آوازبیورو

احمد آباد کے امباواڈی علاقے میں پیر کی دیر رات لڑکی سے چھیڑخانی کے بعد دو فرقوں کے لوگ آمنے سامنے ہو گئے۔ دونوں فریقین میں ہوئے پرتشدد تصادم کے دوران آتشزدگی بھی ہوئی جس میں 15 گاڑیوں کو نذرِ آتش کر دیا گیا۔ اس دوران تین لوگ زخمی بھی ہوئے ہیں۔

بتایا جا رہا ہے کہ امباواڈی علاقے میں الگ الگ ہاسٹل میں الگ الگ فرقوں کے لڑکے رہتے ہیں۔ پیر کی دیر شب کو ایک لڑکے نے لڑکی سے چھیڑخانی کر دی۔ اس حادثہ کے بعد دونوں فریقین میں پہلے بحث ہوئی، اس کے بعد دونوں فریق متصادم ہو گئے۔

ہنگامہ کی اطلاع ملنے کے بعد پولس موقع پر پہنچی اور معاملہ رفع دفع کرنے کی کوشش کی لیکن اس میں کامیابی حاصل نہیں ہوئی۔ ہنگامہ بڑھتا ہوا دیکھ کر پولس نے آتش زنی کر رہے لوگوں پر آنسو گیس کے گولے چھوڑے۔ بتایا جا رہا ہے کہ اس دوران ہنگامہ کر رہے لوگوں نے پولس پر بھی پتھراؤ کیا۔

علاقے میں آتشزدگی کی اطلاع کے بعد فائر بریگیڈ کے دستے بھی جائے وقوع پر پہنچ گئے اور گاڑیوں میں لگی آگ پر قابو پایا۔ پولس کے مطابق فی الحال حالات قابو میں ہیں۔ پورے علاقے میں بڑی تعداد میں پولس فورس کو تعینات کیا گیا ہے۔