مغربی بنگال: بی جے پی امیدوار بابل سُپریو کے خلاف ایف آئی آر درج

بابل سپریو پر الزام ہے کہ انھوں نے بارابنی اسمبلی حلقہ میں کاشی ڈانگ ایف پی اسکول واقع پولنگ سنٹر میں گھس کر وہاں پولنگ عملہ کو دھمکایا۔ اس سلسلے میں تحریری شکایت کے بعد ان کے خلاف کارروائی ہوئی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

یو این آئی

کولکاتا: مرکزی و زیر اور مغربی بنگال کے آسنسول سے بی جے پی کے امیدوار بابل سپریو کے خلاف پولنگ سنٹر کے اندر لوگوں کو مبینہ طورپر دھمکانے کے معاملہ میں ایف آئی آر درج کرائی گئی ہے۔ بابل سپریو پر الزام ہے کہ انہوں نے بارابنی اسمبلی حلقہ میں کاشی ڈانگ ایف پی اسکول واقع پولنگ سنٹر میں گھس کر وہاں پولنگ عملہ کو دھمکایا تھا۔ اس معاملہ میں تحریری شکایت ملنے پر ان کے علاوہ کچھ دیگر لوگوں کے خلاف تعزیرات ہندکی مختلف دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔

اس درمیان بابل سپریو کی کار کو نقصان پہنچانے کے معاملہ میں بارابنی کے اسسٹنٹ پولیس انسپکٹر امدادالحق کی تحریری شکایت پر کچھ نامعلوم لوگوں کے خلاف معاملہ درج کرایا گیا ہے۔ قابل ذکر ہے کہ آسنسول لوک سبھا سیٹ کے لئے 10امیدوار انتخابی میدان میں اترے ہیں، جن میں ٹی ایم سی، بی جے پی، سی پی ایم اور کانگریس کے امیدوار شامل ہیں لیکن اس سیٹ پر ٹی ایم سی اور بی جے پی کے مابین اہم مقابلہ ہونے کی امید ہے۔

بنگالی فلم کی معروف اداکارہ سچترا سین کی بیٹی اور اداکارہ من من سین اس سیٹ سے انتخابی میدان میں اتری ہیں، جنہوں نے 2014کے لوک سبھا انتخابات میں بانکورہ لوک سبھا حلقہ میں نو مرتبہ کے سی پی ایم کے رکن پارلیمان واسدیو آچاریہ کو شکست دیکر اپنے پہلے الیکشن میں بڑا الٹ پھیر کیا۔ اس بار ان کا مقابلہ مرکزی وزیر اور آسنسول سے موجودہ بی جے پی کے رکن پارلیمان بابل سپریو سے ہے۔

Published: 29 Apr 2019, 10:10 PM