وارانسی میں چندر شیکھر کا روڈ شو، مودی سے مقابلے کا اعلان

چندر شیکھر نے میڈیا سے کہا کہ مودی نے 5 سالوں میں بہوجن سماج کو خوب خواب دکھائے تھے جس کا حساب لینے کے لئے اب وہ وارانسی پارلیمانی حلقے سے ان کے خلاف انتخاب لڑیں گے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

وارانسی: وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف انتخابی میدان میں تال ٹھوکنے کے ارادے سے تہذیبی شہر وارانسی آئے بھیم آرمی کے فاؤنڈر چندر شیکھر آزاد نے سنیچر کو ہاتھوں میں ’’ہندوستانی آئین کی کاپی‘‘ لیکر تقریباً 14 کلو میٹر لمبا روڈ شو کیا۔

ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر کے نزدیک آئین ساز ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر کے مجسمہ سے سیر گووردھن پور کے سنت روی داس کی جائے پیدائش پر واقع ان کے مندر میں چندر شیکھر نے متھا ٹیک کر لوک سبھا انتخاب کے لئے اپنی انتخابی مہم کا آغاز کیا۔

انہوں نے میڈیا نمائندوں سے کہا کہ مودی نے 5 سالوں میں بہوجن سماج کا خواب دکھایا تھا جس کا حساب لینے کے لئے وہ وارانسی پارلیمانی حلقے سے ان کے خلاف انتخاب لڑیں گے۔ وزیر اعظم نے ملک کے خزانے سے امیروں کے لئے خوب لٹایا ہے۔ مودی نے 48 ارب ڈالر روپئے کچھ امیروں کو دے دیئے جبکہ غریبوں سے کیا گیا اایک بھی اپنا وعدہ پورا نہیں کیا۔

چندر شیکھر آزاد نے بھارتیہ جنتا پارٹی اورر مودی کو اقتدار سے باہر کرنے کی مہم چلانے والے تمام پارٹیوں سے وارانسی پارلیمانی حلقے میں ان کا تعاون کرنے کی اپیل کی۔ انہوں نے کہا کہ’’ امید ہے کہ وہ لوک سبھا کے انتخابی ’’شطر رنج‘‘ کے کھیل میں بھیم آرمی کے سپاہی کے طور پر ’’وزیر‘‘ کو شکست دینے میں کامیاب رہوں گا اور انہیں واپس گجرات بھیجنے میں بھی کامیاب رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ یہ بھی سبھی جانتے ہیں کہ وزیر کافی طاقتور ہوتا ہے لیکن یہ بھی سچائی ہے کہ کبھی کبھی ایک ادنیٰ سپاہی بھی وزیر کو شکست دے دیتا ہے، اسی امید کے ساتھ انہوں نے بہوجن سماج کی لڑائی کو آگے بڑھانے کے لئے یہاں سے انتخاب لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔