اتراکھنڈ: 6 ماہ کے معصوم پر پولس نے درج کیا کوارنٹائن کی خلاف ورزی کا معاملہ

اترکاشی کے ضلع مجسٹریٹ نے صفائی دیتے ہوئے کہا ہے کہ ”جوینائل لاء کے مطابق 8 سال سے چھوٹے بچے پر معاملہ درج نہیں کیا جا سکتا ہے۔ یہ کس طرح ہوا، اس بات کی جانچ کی جائے گی۔“

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

ہندوستان میں کورونا وائرس پر قابو پانے کی کوششوں کے درمیان جگہ جگہ سے کوارنٹائن اور لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کا معاملہ سامنے آ رہا ہے۔ اس درمیان تراکھنڈ سے ایک عجیب و غریب معاملہ سامنے آیا ہے جہاں 6 مہینے کے ایک معصوم نے کوارنٹائن کی خلاف ورزی کی ہے۔ معصوم کے اوپر یہ الزام اتراکھنڈ کی پولس نے لگایا ہے اور اس کے خلاف معاملہ بھی درج کر لیا گیا ہے۔

دراصل اترکاشی پولس نے کوارنٹائن کیے گئے 51 لوگوں کے خلاف کوارنٹائن ضابطے کی خلاف ورزی کا معاملہ درج کیا ہے اور اس میں چھ ماہ کے بچے کے ساتھ ساتھ ایک 3 سال کا معصوم بھی ہے۔ یہ خبر جب پھیلی تو پولس کی زبردست بدنامی ہونے لگی اور لوگ مذاق بنانے لگے۔ بالآخر اترکاشی کے ضلع مجسٹریٹ نے پورے معاملے میں صفائی دیتے ہوئے کہا کہ "جوینائل لاء کے مطابق 8 سال سے چھوٹے بچے پر معاملہ درج نہیں کیا جا سکتا ہے۔ یہ کس طرح ہوا، اس بات کی جانچ کی جائے گی۔"

واضح رہے کہ اتراکھنڈ میں اب تک کورونا انفیکشن کے 47 معاملے سامنے آ چکے ہیں۔ منگل اور بدھ کے روز صوبے میں کورونا وائرس انفیکشن کا کوئی کیس سامنے نہیں آیا تھا۔ اتراکھنڈ میں اس بیماری کی زد میں آنے والے لوگوں کی سب سے زیادہ تعداد دہرہ دون میں ہے جہاں 25 لوگ اس وائرس سے متاثر ہوئے۔ نینی تال میں 9 اور ہریدوار میں 7 معاملے سامنے آئے۔

Published: 24 Apr 2020, 3:00 PM
next