مودی حکومت کے غیر یقینی فیصلوں نے ملک کو معاشی بحران میں ڈال دیا: دانش علی

بی ایس پی رکن پارلیمنٹ دانش علی کا کہنا ہے کہ مزدوروں کو ان کے گھر لے جانے والی ٹرینیں بغیر نیویگیشن کے چل رہی ہیں جس کی وجہ سے مزدوروں کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

نئی دہلی: بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کے رہنما اور رکن پارلیمنٹ کنور دانش علی نے مودی حکومت کو تمام محاذوں پر ناکام قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کے غیریقینی فیصلوں نے ملک کو معاشی بحران کی طرف دھکیل دیا۔ اتوار کو جاری کردہ ایک بیان میں، دانش علی نے کہا کہ پچھلے دنوں، انہوں نے دیکھا کہ مزدوروں کو ان کے گھر لے جانے والی ٹرینیں بغیر نیویگیشن کے چل رہی ہیں، جس کی وجہ سے مزدوروں کو بھاری پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ حکومت کی حالت بھی وہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کے پاس نہ کوئی وژن ہے اور نہ ہی کوئی منصوبہ ہے ، بس ایک کے بعد ایک قدم ہوا میں اٹھائے جارہے ہیں ۔ نتیجہ یہ کہ ملک کی مجموعی گھریلو پیداوار (جی ڈی پی) گزشتہ 11 سالوں میں 4.2 فیصد کی کم ترین سطح پر پہنچ چکی ہے اور شرح نمو آخری سہ ماہی میں 3.1 فیصد تک پہنچ گئی ہے لیکن حکومت کچھ ٹھوس اقدامات اٹھانے کے بجائے کورونا پر الزام عائد کر رہی ہے۔ اس صورتحال کو بہتر طریقے سے سنبھالا جاسکتا تھا، لیکن حکومت کے بغیر سوچے سمجھے فیصلوں نے ملک کو معاشی بحران کی طرف دھکیل دیا ہے۔

لوک سبھا رکن پارلیمنٹ نے کہا کہ ریلوے پروٹیکشن فورس (آر پی ایف) کے مطابق حکومت کے زیر انتظام خصوصی ٹرینوں میں 80 کارکن اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ مزدوروں کو فراہم کی جانے والی ٹرینوں میں پانی کا کوئی نظام نہیں، کھانے پینے اور بغیر نیویگیشن کے چلنے والی ٹرینیں ڈیڈ لائن سے زیادہ وقت میں اپنی منزل تک پہنچ رہی ہیں۔ پچھلے 160 سالوں میں بھی ایسا نہیں ہوا، جب ٹیکنالوجی نے اتنی ترقی نہیں کی تھی۔ حکومت کو کورونا بحران میں لاک ڈاؤن کو صحیح طریقے سے نافذ کرنا چاہیے تھا، لیکن حکومت کو کوئی ایسا منصوبہ نظر نہیں آرہا ہے جس کا خمیازہ قوم اور ملک کے عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں دو ماہ سے زیادہ عرصے سے لاک ڈاؤن چل رہا ہے لیکن کورونا بحران کم ہونے کے بجائے بڑھتا جارہا ہے۔ ایسی صورتحال میں ایسا لگتا ہے کہ آنے والے دنوں میں حالات اور بھی خوفناک ہوسکتے ہیں۔ ایسی صورتحال میں اپنے آپ کو بچائیں، حکومت کے بھروسے بیٹھے رہنے سے صورتحال بہتر ہوتی نظر نہیں آرہی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلیگرام پر پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next