ایتھوپیا کے وزیراعظم آبے احمد کے لیے ’نوبل امن انعام‘ کا اعلان

افریقی ملک ایتھوپیا کے وزیراعظم آبے احمد کو آج جمعہ کے روز ان کی امن مساعی کے اعتراف نہیں 2019ء کا نوبل انعام دینے کا اعلان کیا گیا

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

افریقی ملک ایتھوپیا کے وزیراعظم آبے احمد کو آج جمعہ کے روز ان کی امن مساعی کے اعتراف نہیں 2019ء کا نوبل انعام دینے کا اعلان کیا گیا۔ ایتھوپیائی وزیراعظم کو پڑوسی ملک اریٹیریا کے ساتھ امن قائم کرنے کی کوششوں پر یہ کو یہ ایوارڈ دیا گیا ہے۔

ناروے کی نوبل کمیٹی کا کہنا ہے، ’’آبے محمد نے انتہائی اہم اصلاحات کو متعارف کیا جنہوں نے کافی شہریوں کو بہتر زندگی اور تابناک مستقبل کے لئے امید دی ہے۔‘‘

نوبل پیس پرائز کی چیئر پرسن بریٹ انئس اینڈرسن نے امن انعام کے لیے خوش نصیب انسان کے نام کا اعلان کرتے ہوئے کہا آبے احمد نے ایریٹیریا کے صدر اسياس أفورقی سے ہاتھ ملاتے ہوئے دونوں ممالک کے درمیان خلفشار اور خانہ جنگی کو ختم کرنے کا کامیابی سے بیڑا اُٹھایا اور ملک کو جمہوریت، خوشحالی اور امن کی راہ پر گامزن کیا۔

وزیراعظم آبے احمد کی کاوشوں سے ایتھوپیا اور اریٹیریا نے جولائی 2018 میں برسوں کی دشمنی اور دونوں ممالک کے درمیان 1998 اور 2000 میں شروع ہونے والی سرحدی جنگ کے خاتمے کا اعلان کرتے ہوئے دو طرفہ تعلقات بحال کر لیے تھے۔

واضح رہے کہ نوبل کے امن انعام کی رقم ’90 لاکھ سویڈیشن کورونا ہے جو آبے احمد کو 10 دسمبر کو اوسلو میں پیش کیا جائے گا۔ گزشتہ برس یہ انعام داعش جنگجوؤں کی قید میں زیادتی کا نشانہ بننے کے بعد اپنی زندگی جنسی تشدد کے خلاف وقف کرنے والی یزدی سماجی کارکن نادیہ مراد اور افریقہ میں جنسی استحصال کا شکار ہونے والی خواتین کی صحت کے لیے کام کرنے والے ڈاکٹر ڈینس مک وگی کو مشترکہ طور پر دیا گیا تھا۔

Published: 11 Oct 2019, 5:55 PM
next