’تبلیغی جماعت‘ پر مارچ میں سنوائی کرے گا سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے کہا ہےکہ معاملے کا جلد نمٹارہ یقینی بنانے کے پیش نظر ملائیشیا کے شہری کو پٹنہ ہائی کورٹ میں عرضی دائرکرنے کی آزادی ہے۔

فائل تصویر آئی اے این ایس
فائل تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

سپریم کورٹ نے کہا کہ وہ تبلیغی جماعت سے متعلق معاملے کی آگے کی سنوائی مارچ کے دوسرے ہفتے میں کرے گا۔ جسٹس اےایم کھانولکر کی سربراہی والی بنچ نے ملائیشیا کے ایک 24 برس کے شہری کی طرف سے پیش ہونے والے ایڈوکیٹ شعیب عالم کی جانب سے اس معاملے کو جلد نمٹانے کے سلسلے میں دیے گئے دلائل سننے کے بعداس کی سنوائی مارچ کے دوسرے ہفتے میں فہرست بند کرنے کی ہدایت دی۔

اس معاملے میں اپنا جواب دائر کرنے کے لیے چھ تاریخیں لے چکی مرکزی حکومت کا موقف رکھنے والے سالیسٹر جنرل تشار مہتانےبھی معاملے کے جلد نمٹارے کا مطالبہ کیا۔ سپریم کورٹ نے کہا کہ معاملے کا جلد نمٹارہ یقینی بنانے کے پیش نظر ملائیشیا کے شہری کو پٹنہ ہائی کورٹ میں عرضی دائرکرنے کی آزادی ہے۔اسے اس کی اجازت دی جاتی ہے۔


بنچ نے کہا،’ہمیں امید اور یقین ہے کہ پٹنہ ہائی کورٹ شکایت سے مناسب ڈھنگ سے نمٹےگا۔ ہم مارچ 2022 کے دوسرے ہفتے میں کلیدی معاملے کو فہرست بند کرنے کی ہدایت دیتے ہیں‘۔ غور طلب ہے کہ تبلیغی جماعت پر ہندوستان میں کووڈ- 19 پھیلانے کے الزامات عائد کیے تھے۔ کووڈ کی پہلی لہر میں تبلیغی جماعت پر طرح طرح کے الزامات لگائے گئے تھے اور جماعت کے لوگوں کو الگ بھی رکھا گیا تھا اور کچھ کو حراست میں بھی رکھا گیا تھا جن کو بعد میں چھوڑ دیا گیا تھا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔