کسانوں کی حمایت میں سونیا گاندھی، یومِ پیدائش نہ منانے کا فیصلہ

سونیا گاندھی نے اعلان کیا کہ وہ زرعی قوانین کے خلاف چل رہی کسان تحریک اور کووڈ-19 کی وبا کی تشویش ناک صورت حال کے سبب اپنا یومِ پیدائش نہیں منائیں گی

کانگریس صدر سونیا گاندھی / تصویر آئی اے این ایس
کانگریس صدر سونیا گاندھی / تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: زرعی قوانین کے خلاف چل رہی کسان تحریک کا آج 13ویں دن ہے اور کسانوں نے آج بھارت بند کا اہتمام کیا ہے۔ دریں اثنا کانگری کی صدر سونیا گاندھی نے اپنا یومِ پیدائش نہیں منانے کا اعلان کیا ہے۔ سونیا گاندھی نے اعلان کیا کہ وہ زرعی قوانین کے خلاف چل رہی کسان تحریک اور کووڈ-19 کی وبا کی تشویش ناک صورت حال کے سبب اپنا یومِ پیدائش نہیں منائیں گی۔

پارلیمنٹ سے ستمبر کو منظور کئے گئے تین زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کرنے والے کسانوں نے اپنی تحریک میں تیزی لانے کے لئے ایک روزہ بند کا اہتمام کیا ہے۔ یہ ملک گیر بند آج صبح 11 بجے سے شروع ہوگا اور سہ پہر 3 بجے تک جاری رہے گا۔ کسانوں کے اس بند کو 20 سے زیادہ سیاسی جماعتوں نے اپنی حمایت پیش کی ہے۔

سونیا گاندھی کا یوم پیدائش 9 دسمبر کو ہے اور اس دن وہ 74 سال کی ہو جائیں گی۔ اس کے ساتھ ہی 9 دسمبر کو کسانوں اور مرکزی حکومت کے مابین چھٹے دور کی بات چیت ہونی ہے۔ اس سے قبل ہونے والی پانچ دور کی بات چیت بے تنیجہ رہی۔ خیال کیا جا رہا ہے کہ 9 دسمبر کو ہونے والی بات چیت کے بعد مسئلہ کا کوئی حل نکل سکتا ہے۔

راجستھان پردیش کانگریس صدر گووند ڈوٹاسرا نے گزشتہ روز کہا تھا کہ سونیا گنادھی اس مرتبہ اپنا یوم پیدائش نہیں منائیں گی۔ ڈوٹاسرا نے ایک پریس کانفرنس سے یہ معلومات دی۔ مرکزی حکومت پر حملہ بولتے ہوئے ڈوٹاسرا نے کہا، مودی حکومت کسان کے حق پر ڈاکہ ڈال رہی ہے اور بھارت بند کے پیش نظر مودی حکومت کے سردی میں بھی پسینے چھوٹ رہے ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


    Published: 08 Dec 2020, 9:13 AM