’ڈبل انجن سرکار‘ کا نعرہ تاناشاہی کا اشارہ، جمہوریت کے لیے خطرناک: یشونت سنہا

یشونت سنہا نے کہا کہ ڈبل انجن کی حکومت کا مطلب ہے کہ ریاست میں دوسرے کی حکومت نہیں ہوگی، وہ ریاستی حکومتوں کے مقابلے ڈبل انجن کی بات کر رہے ہیں۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

ترنمول کانگریس کے نائب صدر اور سابق مرکزی وزیر یشونت سنہا نے پیر کے روز گوا میں کہا کہ بی جے پی کا ووٹروں سے ’ڈبل انجن حکومت‘ کے حق میں ووٹنگ کرنے کی اپیل کرنا برسراقتدار پارٹی کے اندر ایک تاناشاہی روش کو ظاہر کرتا ہے۔ پنجی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سابق مرکزی وزیر مالیات یشونت سنہا نے یہ بھی کہا کہ ’’کبھی کبھی دوہرے انجن کے ساتھ کیا ہوتا ہے کہ ایک انجن ایک طرف جاتا ہے اور دوسرا الگ سمت میں جاتا ہے۔ ڈبل انجن آپ کو الگ الگ سمتوں میں بھی کھینچ سکتا ہے۔ ہم ایک ڈبل انجن حکومت کے بارے میں بات کر رہے ہیں۔‘‘

یشونت سنہا نے کہا کہ ’’میں آپ کو ایک سنجیدہ بات بتانا چاہتا ہوں۔ ایک بہت ہی سنجیدہ ایشو۔ اگر مرکزی حکومت یا بی جے پی ڈبل انجن حکومت کے بارے میں بات کرتی ہے تو اس کا مطلب ہے کہ وہ گوا میں تاناشاہی چلانا چاہتے ہیں۔ یہ جمہوریت کے لیے خطرناک بات ہے۔‘‘


یشونت سنہا کا کہنا ہے کہ ڈبل انجن کی حکومت کا مطلب ہے کہ ریاست میں دوسرے کی حکومت نہیں ہوگی۔ وہ ریاستی حکومتوں کے مقابلے ڈبل انجن کی بات کر رہے ہیں۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ کل کو جب پنچایتوں کی بات ہوگی تو وہ ڈبل اور ٹرپل انجن کی بات کریں گے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔