نویئڈا میں دفعہ 144 کسان احتجاج کو ناکام بنانے کے لئے یا کورونا سے بچاؤ کے لئے

ایک طرف بڑھتی کسان تحریک ہے تو دوسری طرف کورونا کے بڑھتے معاملات ہیں اسی بیچ حکومت نے دو جنوری 2021 تک نویئڈا میں دفعہ 144 نافذ کر دی ہے۔

تصویر یو این آئی
تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

نوئیڈا انتظامیہ نے دہلی سے ملحق نوئیڈا میں کورونا کے بڑھتے معاملات کی وجہ سے وہاں 2 جنوری تک دفعہ 144 نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ نوئیڈا انتظامیہ کو خدشہ ہے کہ 23 دسمبر کو چودھری چرن سنگھ کی یوم پیدائش، 25 دسمبر کو کرسمس اور 31 دسمبر کو نئے سال کے موقع پر نوئیڈا میں زیادہ بھیڑ بڑھ سکتی ہے، جس کی وجہ سے کورونا کے معاملات میں اضافہ کا امکان ہے، اس لئے دفعہ 144 لگانے کا فیصلہ لیا گیا ہے۔ ادھر ایک طبقہ کا کہنا ہے کہ ان تاریخوں کو وجہ بنا کر دراصل نوئیڈا انتظامیہ کسان تحریک میں بڑھ رہی بھیڑ کو بھی روکنا چاہتی ہے۔ واضح رہے دفعہ 144 نافذ ہونے کے بعد کسی بھی جگہ پر چار سے زیادہ افراد جمع نہیں ہوسکتے۔

اے بی پی نیوز میں شائع خبر کے مطابق پولیس کمشنر لاء اینڈ آرڈر آشوتوش دویدی نے بتایا ہے کہ کووڈ- 19 کو ایک وبا کے طور پر اعلان کیا جا چکا ہے اور چونکہ اس ماہ میں تین ایسی تاریخیں ہیں جن پر زیادہ لوگ جمع ہوسکتے ہیں اور زیادہ لوگوں کے جمع ہونے سے وبا پھیل سکتی ہے اس لئے دفعہ 144 نافذ کی گئی ہے تاکہ چار سے زیادہ لوگ ایک جگہ جمع نہ ہوسکیں۔


دوسری طرف ایک طبقہ کا یہ بھی کہنا ہے کہ دفعہ 144 ان تاریخوں کے قریب نافذ کی جا سکتی تھیں لیکن ’بھارت بند‘ سے پہلے ایسا اعلان کیا جانا اس بات کی جانب بھی اشارہ کرتا ہے کہ کہیں نہ کہیں انتظامیہ کو یہ بھی خدشہ ہے کہ کسان تحریک میں زیادہ لوگ جمع ہو سکتے ہیں۔

واضح رہے سرکاری اعداد و شمارکے مطابق اس ضلع میں کورونا معاملوں کی کل تعداد 23,458 ہے اور کل اتر پردیش میں نئے معاملوں کی تعداد 1950 تھی جبکہ اس وبا سے مرنے والوں کی تعداد ابھی تک7924 ہو گئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔