گیان واپی مسجد میں دوسرے دن کا سروے، باہر حفاظت کے سخت انتظامات

گزشتہ روز گیان واپی مسجد کے تہہ خانہ اور مغربی دیوار کا سروے ہوا تھا، مسجد احاطہ سے باہر نکلنے پر ’ویشو ویدک سناتن سنگھ‘ کے سربراہ جتیندر سنگھ نے کہا تھا کہ یہاں جو مل رہا ہے وہ تصور سے بھی زیادہ ہے

وارانسی کی گیان واپی مسجد/ تصویر آئی اے این ایس
وارانسی کی گیان واپی مسجد/ تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

وارانسی: وارانسی کی گیان واپی مسجد میں سخت سیکورٹی کے درمیان دوسرے دن کا سروے صبح کے وقت شروع ہو گیا۔ وارانسی کے پولس کمشنر اے ستیش گنیش نے کہا، “آج دوسرے دن کمیشن کی کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔ کمیشن کے تمام ارکان اندر جا چکے ہیں اور کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔ آج سیکورٹی کو بڑھا دیا گیا ہے اور اس بات کو یقینی بنانے کے لیے خصوصی توجہ دی گئی ہے کہ مندر میں درشن میں لوگوں کو کوئی تکلیف نہ ہو۔‘‘

اس سے قبل ہفتہ کے روز بھی سروے کیا گیا تھا۔ گزشتہ روز گیان واپی مسجد کے تہہ خانے کے چار کمروں اور مغربی دیوار کا سروے کیا گیا۔ سروے کے بعد مسجد کے احاطے سے باہر آنے والے وشو ویدک سناتن سنگھ کے سربراہ جتیندر سنگھ بسین نے کہا تھا کہ یہاں جو مل رہا ہے وہ تصور سے بھی زیادہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ اتوار کا سروے بھی اہم ہے۔ بسین نے کہا کہ کچھ تالے کھولے گئے اور کچھ کو توڑنا بھی پڑا۔ سروے کی رپورٹ جلد ہی سب کے سامنے ہوگی۔


خیال رہے کہ ہفتہ کے روز سروے کے دوران گیان واپی مسجد احاطہ کی حفاظت کے لیے 1500 سے زیادہ پولیس اہلکار اور پی اے سی اہلکار تعینات کیے گئے تھے۔ اس کے ساتھ ہی گیان واپی مسجد احاطہ کے 500 میٹر کے دائرے میں لوگوں کی نقل و حرکت پر پابندی عائد کر گئی ہے۔ سروے کے وقت ارد گرد کی دکانوں کو بھی بند رکھنے کا حکم دیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق گیان واپی مسجد کے سروے کا کام 65 فیصد مکمل ہو چکا ہے۔ تاہم سروے کے دوران روشنی کی کمی کی وجہ سے ویڈیو گرافی میں کچھ دشواری پیش آئی لیکن، مانا جا رہا ہے کہ آج سروے کا کام مکمل ہو جائے گا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔