ہماچل میں دارچہ-سرچو سڑک بند، نو مزدوروں کو بچایا گیا

شملہ سمیت ریاست کے کئی علاقوں میں موسلادھار بارش ہوئی ہے، جب کہ برف باری کے لیے اورنج الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔

<div class="paragraphs"><p>فائل علامتی تصویر آئی اے این ایس</p></div>

فائل علامتی تصویر آئی اے این ایس

user

یو این آئی

ہماچل پردیش کے قبائلی علاقوں لاہول اور کلّو کی اونچی چوٹیوں پر برف باری ہوئی ہے جبکہ نچلے علاقوں میں بارش ہوئی ہے۔ قومی شاہراہ 3 منالی لیہہ برف باری کی وجہ سے دارچہ اور سرچو کے درمیان بند ہے۔

اس کے ساتھ ہی دارچہ شنکولہ سڑک بھی برف باری کی وجہ سے بند ہوگئی ہے۔ پولیس نے شنکولہ میں برف باری کی وجہ سے پھنسے نو مزدوروں کو بچا لیا ہے۔ یہ کارکن رات کو برف باری میں پھنس گئے تھے۔ انہیں بچا کر بحفاظت دارچہ پہنچایا گیا۔


نیشنل ہائی وے 505 براستہ گرانفو کو برف باری کی وجہ سے بند کر دیا گیا ہے۔ گرانفو-کاجا-سمدو روڈ فی الحال ہر قسم کی گاڑیوں کے لیے بند ہے۔ تاہم تاندی-تندی، کلاڑ-سنساری روڈ پر گاڑیوں کی آمدورفت جاری ہے۔ لاہول اسپتی انتظامیہ نے سڑکوں کی حالت دیکھ کر ہی سفر کرنے کی درخواست کی ہے۔
شملہ سمیت ریاست کے کئی علاقوں میں موسلادھار بارش ہوئی ہے، جب کہ برف باری کے لیے اورنج الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔ ریاست میں 17 اکتوبر تک موسم خراب رہنے کی پیش قیاسی کی گئی ہے جبکہ 18 اکتوبر سے موسم صاف رہنے کا امکان ہے۔

موسمیاتی مرکز شملہ کے مطابق چمبہ، کلّو، کانگڑا اور لاہول اسپتی کے کئی علاقوں میں اگلے دو دنوں تک 'اورنج الرٹ' نافذ رہے گا۔ اس دوران ان اضلاع کے اونچائی والے علاقوں میں برف باری اور دیگر علاقوں میں بارش کی وارننگ جاری کی گئی ہے۔ اس دوران باقی اضلاع کے لیے ’یلو الرٹ‘ جاری کیا گیا ہے۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;