سی بی ایس ای امتحان کے انعقاد پر حکومت نظرثانی کرے: پرینکا گاندھی

سی بی ایس ای بورڈ نے ایک سرکلر جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ وہ مئی ماہ میں منعقد ہونے والے بورڈ کے امتحانات کرائے گی، جس پر پرینکا گاندھی نے وزیر تعلیم رمیش پوکھریال نشانک کو خط لکھا ہے۔

پرینکا گاندھی، تصویر @INCIndia
پرینکا گاندھی، تصویر @INCIndia
user

یو این آئی

سی بی ایس ای بورڈ نے ایک سرکلر جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ وہ مئی ماہ میں منعقد ہونے والے بورڈ کے امتحانات کرائے گی، جس پر کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے وزیر تعلیم رمیش پوکڑیال نشانک کو خط لکھا ہے۔ انہوں نے اس سرکولر کو ایک 'چونکا دینے والا' فیصلہ قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ والدین کے ذریعہ اس معاملے میں 'خدشات' کا اظہار کرنے کے باوجود سی بی ایس ای نے امتحان لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ والدین کے یہ 'خدشات' غیر معقول نہیں ہیں، لہذا امتحان منسوخ ہونا چاہیے۔

انہوں نے اپنے خط میں کہا کہ "بڑے پیمانے اور ہجوم والے امتحانی مراکز میں طلبا کی حفاظت کو یقینی بنانا عملی طور پر ناممکن ہوگا۔ اس کے علاوہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو دیکھتے ہوئے، یہ صرف ان طلباء کے لئے نہیں ہے جو خطرے میں ہیں، بلکہ ان کے اساتذہ، ان کے ساتھ رابطے میں رہنے والے امتحان مراکز کے نگراں اور ان کے کنبہ کے افراد کو بھی خطرہ لاحق ہے۔ اگر کوئی بھی مرکز ہاٹ اسپاٹ ثابت ہوتا ہے تو، حکومت اور سی بی ایس ای بورڈ کو اس واقعے کے لئے ذمہ دار ٹھہرایا جائے گا۔"

پرینکا گاندھی نے مزید کہا کہ "یہ صرف ان بچوں کی جسمانی صحت ہی نہیں ہے بلکہ ان کی نفسیات کے بارے میں بھی ہے جس کے گہرے اثرات ان بچوں پر مرتب ہوسکتے ہیں۔ انھیں پہلے ہی امتحان کے بے حد دباؤ کا سامنا کرنا پڑتا ہے، مزید یہ کہ وہ اب ان حالات سے بھی خوفزدہ ہوں گے، جس میں وہ ہوں گے۔"

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 11 Apr 2021, 6:39 PM