پرینکا گاندھی کا وزیر اعظم مودی پر حملہ، ’ایک صنعت کار ہر روز 1600 کروڑ روپے کما رہا ہے، کسان 27 روپے کا بھی محروم‘

پرینکا گاندھی نے کہا کہ انتخابات میں لیڈروں کو عوامی مسائل پر بات کرنی ہوگی، انہیں بتانا ہوگا کہ مہنگائی کیوں ہے، بے روزگاری کیوں ہے؟

<div class="paragraphs"><p>پرینکا گاندھی / ویڈیو گریب</p></div>

پرینکا گاندھی / ویڈیو گریب

user

قومی آوازبیورو

بھوپال: کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے آج گوالیار میں منعقدہ ’جن آکروش ریلی‘ سے خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان سیاست کی جنگ سچائی کی جنگ ہے۔ اس دوران انہوں نے مہنگائی، بے روزگاری، گھپلوں اور پٹواری بھرتی میں دھاندلی کا مسئلہ اٹھایا۔ انہوں نے کہا کہ جس صنعت کار کو وزیر اعظم نے ساری جائیداد سونپ دی ہے، وہ ایک دن میں 1600 کروڑ روپے کما رہا ہے، دوسری طرف ہمارا کسان ایک دن میں 27 روپے کمانے سے قاصر ہے۔

دریں اثنا، انہوں نے وزیر اعظم نریندر مودی پر بھی حملہ بولا۔ انہوں نے کہا کہ دہلی میں منعقدہ ایک اجلاس میں وزیر اعظم نے ملک کے اپوزیشن لیڈروں اور پارٹیوں کو چور کہا اور ملک کے سینئر لیڈروں کی توہین کی۔ منی پور پچھلے کئی مہینوں سے جل رہا ہے لیکن وزیر اعظم خاموش رہے۔ وہ 77 دن تک خاموش رہے اور جب بولے تو اس میں بھی سیاست کی۔


پرینکا گاندھی نے کہا کہ میں اپنی تقریر میں 10 منٹ تک وزیر اعظم پر تنقید کر سکتی ہوں۔ میں شیوراج پر 10 منٹ تک تنقید کر سکتی ہوں۔ میں سندھیا پر 10 منٹ تک بات کر سکتی ہوں لیکن میں یہاں آپ کے مسائل کے بارے میں بات کرنے آئی ہوں۔ مہنگائی کی بات کرنے آئی ہوں۔ انہوں نے کہا کہ آج مہنگائی زندگی پر بوجھ بن چکی ہے، خواتین مہنگائی کا بوجھ اٹھا رہی ہیں۔ ایسے وقت میں لوگوں پر تنقید کرنا مناسب نہیں۔ لیڈروں کو انتخابات میں عوامی مسائل پر بات کرنی ہوگی۔ انہیں بتانا ہوگا کہ مہنگائی کیوں ہے، بے روزگاری کیوں ہے؟

ریلی کے دوران پرینکا گاندھی نے ان وعدوں کو دہرایا جو کانگریس حکومت بنانے کے بعد پورے کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ جن ریاستوں میں ہماری حکومتیں ہیں وہاں پرانی پنشن اسکیم لاگو کی گئی ہے، مدھیہ پردیش میں بھی پرانی پنشن اسکیم کو نافذ کیا جائے گا۔ خواتین کے بینک اکاؤنٹ میں ہر ماہ 1500 روپے جمع کرائے جائیں گے، ایل پی جی سلنڈر 500 روپے میں ملے گا، 100 یونٹ بجلی مفت اور 200 یونٹ بجلی آدھی قیمت پر دی جائے گی۔ اس کے علاوہ کسانوں کے قرض معافی کا کام بھی مکمل کیا جائے گا۔ اس کے علاوہ پرینکا نے کمل ناتھ سے کہا کہ وہ کانگریس کی حکومت بننے پر معذوروں کو دی جانے والی پنشن میں اضافہ کریں۔


پرینکا گاندھی نے مرکزی وزیر جیوترادتیہ سندھیا کے گڑھ گوالیار میں سندھیا خاندان کو نشانہ بنایا۔ اس سے پہلے کمل ناتھ نے کہا کہ بی جے پی حکومت نے مدھیہ پردیش کو جھوٹ کی راجدھانی بنا دیا ہے، نوجوانوں سے جھوٹ بولا، قبائلیوں سے جھوٹ بولا، ماں نرمدا سے جھوٹ بولا، ہمارے آدیواسیوں سے جھوٹ بولا۔ میں پوچھنا چاہتا ہوں کہ اس نے کس سے جھوٹ نہیں بولا۔ شیوراج سنگھ جھوٹ کی مشین ہے، اعلانات کی مشین ہے، گھوٹالوں کی مشین ہے۔ انتخابات میں چار ماہ باقی ہیں، یہ مشین اب دوگنی رفتار سے چل رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ الیکشن مدھیہ پردیش کے مستقبل کا فیصلہ کرے گا۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;