جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کے لیے سیاسی جماعتیں تیار رہیں: غلام نبی آزاد

کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے کہا کہ اگرچہ فی الوقت جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات منعقد ہونے کی کوئی علامات دکھائی نہیں دے رہی ہیں لیکن اسمبلی نشستوں کی از سر نو حد بندی کی تیاریاں چل رہی ہیں۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

جموں: سینئر کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے تمام سیاسی جماعتوں بشمول کانگریس کو جموں و کشمیر میں اسمبلی نشستوں کی حد بندی کے بعد انتخابات میں حصہ لینے کے لئے تیار رہنے کو کہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگرچہ فی الوقت جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات منعقد ہونے کی کوئی علامات دکھائی نہیں دے رہی ہیں لیکن اسمبلی نشستوں کی از سر نو حد بندی کی تیاریاں چل رہی ہیں۔

موصوف لیڈر نے ان باتوں کا اظہار یہاں نامہ نگاروں کے ساتھ بات چیف کے دوران کیا۔ وہ جموں و کشمیر کے تین روزہ دورے پر ہفتے کے روز یہاں پہنچے۔ انہوں نے اس موقع پر کہا کہ ’’اگرچہ ابھی جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات منعقد کرانے کی کوئی علامات دکھائی نہیں دے رہی ہیں لیکن اسمبلی نشستوں کی از سر نو حد بندی کی تیاریاں چل رہی ہیں۔‘‘ ان کا کہنا تھا کہ ’’تمام سیاسی جماعتوں بشمول کانگریس کو ان انتخابات میں حصہ لینے کے لئے تیار رہنا چاہئے جن کے انعقاد کا اعلان اسمبلی نشستوں کی سرنو حدبندی کے بعد کسی بھی وقت کیا جاسکتا ہے۔‘‘


پیگاسس جاسوسی معاملے پر حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے غلام نبی آزاد نے کہا کہ یہ ایک قابل بحث معاملہ ہے اور رکن پارلیمنٹ پہلے ہی اس معاملے پر پارلیمنٹ میں بحث کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ حالیہ سیلابوں سے مختلف ریاستوں بشمول جموں و کشمیر میں ہوئے جانی ومالی نقصان پر اظہار افسوس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حالیہ سیلابوں سے جموں و کشمیر میں ہی نہیں بلکہ ہماچل پردیش میں بھی کافی تباہی مچی ہے مجھے امید ہے کہ حکومتیں متاثرین کو بھر پور امداد فراہم کریں گی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔