ہندوستانیوں پر مہنگائی کی مار جاری، لگاتار چھٹے دن پٹرول کی قیمت میں اضافہ

بین الاقوامی بازار میں خام تیل کی قیمتیں ایک بار پھر تیزی سے بڑھنے لگی ہیں۔ بنچ مارک خام تیل برینٹ کروڈ کی قیمت میں اس مہینے دو ڈالر فی بیرل سے زیادہ کا اضافہ درج کیا گیا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

پٹرول اور ڈیزل کی قیمت میں اضافہ سے راحت ملنے کی کوئی گنجائش نظر نہیں آرہی ہے۔ بین الاقوامی بازار میں گزشتہ دنوں خام تیل کی قیمت میں ہوئے اضافے کی وجہ سے لگاتار چھٹے دن منگل کو پٹرول کی قیمت میں بھی اضافہ دیکھنے کو ملا۔ پٹرول دہلی، کولکاتا اور ممبئی میں ایک بار پھر 15 پیسے جب کہ چنئی میں 16 پیسے فی لیٹر مہنگا ہو گیا ہے اور چاروں میٹرو پولیٹن سٹی میں ڈیزل کی قیمت میں پانچ پیسے فی لیٹر کا اضافہ ہوا ہے۔ اس سے پہلے تیل کمپنیوں نے لگاتار 6 دنوں تک ڈیزل کی قیمت میں کوئی تبدیلی نہیں کی تھی۔

انڈین آئل کی ویب سائٹ کے مطابق دہلی، کولکاتا، ممبئی اور چنئی میں پٹرول کی قیمت بڑھ کر بالترتیب 74.20 روپے، 76.89 روپے، 79.86 روپے اور 77.13 روپے فی لیٹر ہو گئی ہیں۔ چاروں میٹرو پولیٹن شہروں میں ڈیزل کی قیمت بھی بڑھ کر بالترتیب 65.84 روپے، 68.25 روپے، 69.06 روپے اور 69.59 روپے فی لیٹر ہو گئی ہیں۔

بین الاقوامی بازار میں خام تیل کی قیمت میں گزشتہ سیشن کی گراوٹ کے بعد پھر تیزی کا رخ بنا ہوا ہے۔ بنچ مارک خام تیل برینٹ کروڈ کی قیمت میں اس مہینے دو ڈالر فی بیرل سے زیادہ کا اضافہ درج کیا گیا ہے۔ گزشتہ مہینے 31 اکتوبر کو آئی سی ای پر برینٹ کروڈ کا جنوری ایگریمنٹ 60.23 ڈالر فی بیرل پر بند ہوا تھا جب کہ منگل کو برینٹ کروڈ کے جنوری ایگریمنٹ میں 60.30 ڈالر فی بیرل پر کاروبار چل رہا تھا۔