بچوں کو ’کوویکسین‘ ٹیکہ لگانے کی منظوری

کمپنی نے کہا ہے کہ بالغوں اور بچوں کو ایک ہی ٹیکہ لگایا جا سکے گا، یہ وہی کو ویکسین ٹیکہ ہے جو بالغ شہریوں کو دیاجا رہا ہے۔

فائل تصویر آئی اے این ایس
فائل تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

ہندوستانی کووڈ ویکسین بنانے والی کمپنی بھارت بائیوٹیک نے ہفتہ کو کہا کہ اس کی کووڈ ویکسین کو بچوں کو لگانے کی منظوری مل گئی ہے۔

بھارت بائیوٹیک نے ایک بیان میں کہا کہ کو ویکسین کو 12 سے 18 سال کی عمر کے بچوں کے لیے ہنگامی حالات میں استعمال کے لیے منظوری دی گئی ہے۔ یہ وہی کو ویکسین ٹیکہ ہے جو بالغ شہریوں کو دیاجا رہا ہے۔ کمپنی نے کہا ہے کہ بالغوں اور بچوں کو ایک ہی ٹیکہ لگایا جا سکے گا۔


کمپنی نے کہا ہے کہ کو ویکسین کووڈ کے اصل اور اس کے تمام ویریئنٹ پر کارآمد رہی ہے۔ مطالعات سے پتہ چلتا ہے کہ یہ بچوں پر بھی موثر ہے۔ اس سے بچوں میں قوت مدافعت میں اضافہ ہوا ہے۔ یہ ویکسین بچوں اور بڑوں کو یکساں تحفظ فراہم کرے گی۔

مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے بچوں کے لیے کورونا ویکسین کی شروعات کو خوش آئند قدم قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے حکومت کی حساسیت کا پتہ چلتا ہے۔


وزیر اعظم نریندر مودی کے ہفتہ کی دیر رات قوم سے خطاب میں نوعمروں کو کورونا ویکسین دیئے جانے کی شروعات کا اعلان کرنے کے بعد، مسٹر شاہ نے سلسلہ وار ٹویٹس میں کہا ’’وزیراعظم نریندر مودی جی کی جانب سے 15 سے 18 برس کے بچوں کو ویکسین کی ڈوز شروع کرنا بہت خوش آئند قدم ہے۔ یہ اسکول اور کالج جانے والے بچوں کے تئیں مودی جی کی حساسیت کو ظاہر کرتا ہے اس سے ان کے اہل خانہ بھی پریشانی سے آزاد ہو جائیں گے۔ میں اس کے لیے مودی جی کا شکریہ ادا کرتا ہوں‘‘۔

انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے قوم سے اپنے خطاب میں ملک کو اومیکرون وائرس کے تئیں بیدار رہتے ہوئے بغیر گھبرائے سبھی کووڈ پروٹوکول پر پہلے کی طرح ہی عمل کرنے کی صلاح دی ہے۔ احتیاط، ہوشیاری اور ویکسین ہی ہمیں کورونا کے خطرے پر فتح دلوا سکتی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 26 Dec 2021, 6:40 AM