تیل ٹینکروں پر حملے کے لئے ایران ذمہ دار: محمد بن سلمان

سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے خلیج عمان میں تیل کے ٹینکروں پر حملے کے لئے ایران کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔

سوشل میڈیا 
سوشل میڈیا
user

یو این آئی

شہزادہ محمد بن سلمان واضح طور پر کہا ہے کہ ایران ہی خلیج عمان میں تیل کے ٹینکروں پر حملے کے لئے ذمہ دار ہے اور ایران اپنے غیر ذمہ دارانہ عمل سے علاقہ کے امن کو نقصان پہنچا رہا ہے۔سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ نے روزنامہ اخبارات الشرق الاوسط کو اتوار کو دیے ایک انٹرویو میں یہ الزام لگائے۔شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا’’ایرانی حکومت نے جاپانی وزیر اعظم شنزو آبے کے ایران دورے کے دوران ایک مہمان کے طور پر ان کا استقبال نہیں کیا۔ جبکہ ایران نے خلیج عمان میں تیل ٹینکروں پر حملہ کر دیا جس میں سے ایک شاید جاپانی تھا‘‘۔

خلیج عمان میں جمعرات کو آبنائے ہرمز کے نزدیک دو تیل ٹینکروں اور كوكوکا كریجيس میں دھماکہ کیا گیا تھا۔ایران اور عرب کے خلیجی ممالک کے آبی علاقے میں ہوئے اس حادثے کی وجوہات کا ابھی تک پتہ نہیں چل سکا ہے۔ امریکہ کے وزیر خارجہ مائیک پومپيو نے اس کے لیے ایران کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔ مسٹر پومپيو کے مطابق امریکہ نے خفیہ اطلاعات کی بنیاد پر یہ الزام لگائے ہیں۔


امریکی فوج نے اپنے دعوے کے حق میں ایک ویڈیو جاری کیا ہے جس میں ایرانی سکیورٹی فورسز ایک ٹینکر سے دھماکہ خیز مواد ہٹاتے ہوئے دکھائی دے رہی ہے ۔ برطانیہ کی وزارت خارجہ نے ایرانی فوج کے ریولیشنری گارڈ کو عمان کی خلیج میں تیل کے ٹینکروں پر حملے کے لئے ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔ایران نے ان تمام الزامات کی تردید کی ہے۔ روس کے نائب وزیر خارجہ سرغئی ريابكوو نے جانچ سے قبل ایران پر الزام لگانے والے ممالک کو خبردار کیا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔