موبائل کمپنیوں کا ٹیرف میں اضافہ، کس کمپنی کے پلان سب سے سستے؟

ملک میں موبائل سروس فراہم کرنے والی کمپنیوں بھارتی ایئر ٹیل، ووڈا آئیڈیا اور ریلائنس جیو نے پری پیڈ گاہکوں کے لئے تین سال بعد ٹیرف میں اضافہ کیا ہے

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

یو این آئی

نئی دہلی: ملک میں موبائل سروس فراہم کرنے والی کمپنیوں بھارتی ایئر ٹیل، ووڈا آئیڈیا اور ریلائنس جیو نے پری پیڈ گاہکوں کے لئے تین سال بعد ٹیرف میں اضافہ کیا ہے۔ ووڈا آئیڈیا اور ایئر ٹیل کی قیمتیں آج سے مہنگی ہو گئی ہیں جبکہ جیو کا ٹیرف چھ دسمبر سے بڑھ جائے گا۔ ووڈا آئیڈیا اور ایئر ٹیل کے ٹیرف میں 41 فیصد تک کا اضافہ دیکھنے کو ملا ہے۔ دونوں کمپنیوں نے اپنے مقبول پلانوں میں بھی اچھا خاصا اضافہ کیا ہے۔ جیو کے نئے آل ان ون پلان چھ دسمبر سے نافذ ہو جائیں گے۔ کمپنی نے اگرچہ ابھی نئے پلانوں کو ظاہر نہیں کیا ہے۔

تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ ٹیرف قیمتیں ٹیلی کمیونیکیشن کمپنیوں کی مالی حالت کے لئے اہم ثابت ہو سکتے ہیں۔ ووڈا آئیڈیا اور ایئر ٹیل کو رواں مالی سال کی دوسری سہ ماہی میں زبردست نقصان ہوا تھا۔ایسی بھی رپورٹیں سامنے آئی تھیں کی ووڈا ہندوستانی مارکیٹ سے اپنا کاروبار بھی سمیٹ سکتا ہے۔

بینک آف امریکہ میرل لنچ کا خیال ہے کہ ریلائنس جیو کے نئے آل ان ون پلانس میں قیمتیں بڑھانے کے باوجود دونوں دیگر کمپنیوں کے مقابلے میں 15 سے 20 فیصد تک سستے رہ سکتے ہیں۔ میرل لنچ کا خیال ہے کہ جیو نے 40 فیصد تک ٹیرف بڑھانے کا اعلان کیا ہے لیکن امید ہے کہ وہ اس کے مقبول پلانوں میں 25 سے 30 فیصد تک کا اضافہ ہی کرے گا ۔ریلائنس جیو نے ٹیرف میں اضافہ کا اعلان کرتے وقت بھی کہا تھا کہ وہ اپنے گاہکوں کو 300 فیصد زیادہ منافع دے گا۔میرل لنچ کا خیال ہے کہ یہ فائدہ ڈیٹا کی شکل میں دیا جا سکتا ہے۔

واضح رہے کہ جیو نے پانچ ستمبر 2016 کو ٹیلی کمیونیکیشن کے شعبے میں قدم رکھا تھا اور تین سال کے دوران سستے پلانوں اور اچھی سروس فراہم کراکر 35 کروڑ سے زیادہ گاہک بنا چکا ہے جبکہ دیگر کمپنیوں کے گاہکوں کی تعداد میں خاصی کمی آئی ہے۔ ادھر گلوبل بروکریز فرم کریڈٹ سوئس کا بھی خیال ہے کہ جیو کے آل ان ون ٹیرف پلان بھارتی ایئر ٹیل اور ووڈا آئیڈیا کے نئے پلانوں کے مقابلے میں 20 فیصد تک سستے رہ سکتے ہیں۔بھارتی ایئر ٹیل اور ووڈا-آئیڈیا نے دوسرے نیٹ ورک پر كالنگ کی قیمتیں بڑھانے کے بعد سے محدود کر دیا ہے۔ کریڈٹ سوئس نے ان لمیٹیڈ كالنگ پلانوں کے ختم ہو جانے کو ان دونوں کمپنیوں کی مالی حالت کے لئے اچھا بتایا ہے۔

سپریم کورٹ کے ایڈجسٹ گروس ریونیو (اے جی آر ) پر مرکز کے موقف کو صحیح قرار دینا ٹیلی کمیونیکیشن کمپنیوں کی مالی حالت کے لئے بہت بڑا دھچکا تھا۔ عدالت نے اپنے حکم میں کمپنیوں کو حکم دیا تھا کہ وہ حکومت کو پرانا بقایا جو تقریبا 1.47 لاکھ کروڑ روپے کے قریب ہے ادا کریں۔

ریلائنس جیو ٹیرف کا اضافہ مؤثر ہونے سے پہلے 'بیس پرائس پلان' لایا ہے جس کی میعاد 336 دن ہوگی۔اس خصوصی آفر کے تحت جیو 444 روپئے کے 84 دن کی ویلیڈٹی والے پلان پر گاہکوں کو 444 روپے کے چار ری چارج کی سہولت دے رہا ہے۔اس کے تحت ایک ریچارج کی ویلیڈٹی 84 دن کی ہے اس طرح چار ری چارج پر 336 دنوں تک گاہکوں کو نئے مہنگے پلان سے رعایت رہے گی۔

اس پلان کے تحت گاہک کو دو جی بی ڈیٹا بھی ہر روز ملے گا۔ موجودہ وقت میں جیو کے آل ان ون پلان کے تحت چار پلان 222، 333، 444 اور 555 روپے کے ہیں۔ اس میں 222 روپے کا پلان 28 دن کا اور 333 کا 56 دن اور 444 روپے والا 84 دن کا ہے۔ ان تینوں پلانوں میں گاہک جیو سے جیو ان لمیٹیڈ بات کر سکتا ہے۔ اس کے علاوہ فی دن 2 جی بی ڈیٹا، 100 ایس ایم ایس اور ایک ہزار آئی یو سی منٹ ملتے ہیں۔