کیوں میناکشی لیکھی کوچین کے ساتھ تعلقات بہتر ہونے کی امیدہے؟

میناکشی لیکھی نےسکم میں صحافیوں اور وکلاء سے بات چیت کرتے ہوئے ہندوستان کا چین کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کے امکانات کا بھی اظہار کیا۔

فائل تصویر آئی اے این ایس
فائل تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

کئی سالوں سےہندوستان کےچین کے ساتھ تعلقات اچھے نہیں ہیں اور ابھی حال ہی میں چین کاافغانستان میں جوکردار سامنےآیا ہےاس کےبعدتوچین کے ساتھ جلدتعلقات ٹھیک ہوتے نظرنہیں آ رہےلیکن وزیر مملکت برائے امور خارجہ میناکشی لیکھی نے اتوار کو امید ظاہر کی ہے کہ چین کے ساتھ تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں۔انہوں نےیہ بات کس وجہ سے کہی وہ بات عام آدمی کی سمجھ میں نہیں آرہی ہے۔

محترمہ لیکھی نے گورنر ہاؤس میں صحافیوں اور وکلاء سے بات چیت کرتے ہوئے ہندوستان کا چین کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کے امکانات کا بھی اظہار کیا۔ انہوں نے بتایا کہ ہم امید اور دعا کرتے ہیں کہ ہمارے ایک دیگر پڑوسی نیپال کے ساتھ کوئی مسئلہ پیدا نہ ہو۔


انہوں نے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے شہریوں کی شراکت اور حکومت کی پالیسی کی پاسداری کئے جانے کی بھی تعریف کی۔

محترمہ لیکھی نے کہا کہ وہ کچھ چیزیں دیکھنے اور تعلقات کو مستحکم کرنے کے لیے سکم میں ہیں۔ گنگٹوک میں اپنے ابتدائی دنوں کو یاد کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سکم پہلے کے مقابلے میں کافی حد تک بدل گیا ہے۔


انہوں نے بتایا کہ وزیر اعظم نے تمام وزراء کے لیے شمال مشرقی ریاستوں کے دورے کا معمول طے کیا ہے۔ یہاں کے لوگ شاندار اور نظم و ضبط کے مالک ہیں۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کی شراکت مقاصد کے حصول کو آسان بناتی ہے۔

وزیر مملکت برائے امور خارجہ پہلی خاتون وی وی آئی پی ہیں جنہوں نے بگڈوگرا ہوائی اڈے سے گنگٹوک تک سڑک کے ذریعے سفر کیا۔ انہیں گنگٹوک تک پہنچنے میں تاخیر ہوئی کیونکہ وہ قومی شاہراہ -10 پر ملی میں لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے ٹریفک جام کی وجہ سے راستہ بدلنے کے لئے مجبور ہونا پڑا۔ بالآخر وہ کلمپونگ کے راستے گنگٹوک پہنچی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔