مدرسہ کے استاد اور 47 بچوں کو ٹرین سے اتار کر پوچھ گچھ

واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے جی آر پی انچارج ہریش شرما نے بتایا کہ بچوں کو ٹرین سے اتار کر سٹی پولس پوچھ گچھ کے لئے لے گئی ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

راج ناندگاؤں (چھگ): ہاوڑہ ممبئی میل سے مہاراشٹر جا رہے ایک مدرسہ کے استاد اور 45 سے زیادہ بچوں کو پولس نے ٹرین سے اتار دیا اور ان سے پوچھ گچھ کی گئی۔

اطلاعات کی بنیاد پر پولس نے سرکاری ریلوے پولس (جی آر پی) اور راج ناندگاوں پولس نے آج صبح ہاوڑہ ممبئی میل 12810 کے یہاں پہنچتے ہی تمام 47 بچوں اور ایک استاد کو اتار لیا۔ اتارے گئے تمام افراد کو پولس نے نیچے اتار کر پوچھ گچھ کی، اس موقع پر بچوں کی فلاح و بہبود کا محکمہ کے افسران بھی موجود تھے۔ اطلاعات کے مطابق بچوں کو بہار کے بھاگلپور ضلع کے گاؤں تروپیتی سے مہاراشٹر کے بلڑھانا لے جایا جا رہا تھا۔

واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے جی آر پی انچارج ہریش شرما نے بتایا کہ بچوں کو ٹرین سے اتار کر سٹی پولس پوچھ گچھ کے لئے لے گئی ہے۔

ایڈیشنل پولس سپرنٹنڈنٹ اودے بھان سنگھ چوہان نے خبر رساں ایجنسی يو این آئی کو بتایا کہ 48 بچوں کے ساتھ جا رہے شاکر حسین نام کے استاد کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ کی جا رہی ہے۔ استاد کے پاس بچوں کو لانے لے جانے کا والدین کے ذریعہ رضامندی خط بھی موجود نہیں تھا۔ پورے معاملے کی جانچ ڈی ایس پی آشا رانی اور سیٹی کوتوالی انچارج کر رہے ہیں۔