کریڈٹ کمپنی کے نام پر کروڑوں ہڑپنے والا سرغنہ لکھنؤ سے گرفتار

موصولہ اطلاع کے مطابق کیمونا کریڈٹ کوآپریٹو سوسائٹی نامی کمپنی کی جانب سے کماؤں میں دفتر کھولے گئے اور کلیدی ملزم نے لوگوں کو کئی طرح کے سبز باغ دیکھا کر کروڑوں روپے کی رقم ہڑپ کر فرار ہو گیا۔

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

نینی تال: کیمونا کریڈٹ کوآپریٹو سوسائٹی کے نام پر اترا کھنڈ کے کماؤں کے سادہ لوح لوگو ں سے کروڑوں روپے ہڑپنے والے ملزم کو پولیس گرفتار کرنے میں کامیاب رہی ہے۔ پولیس نے ملزم کو لکھنؤ سے گرفتار کیا۔ موصولہ اطلاع کے مطابق کیمونا کریڈٹ کوآپریٹو سوسائٹی نامی کمپنی کی جانب سے کماؤں کے چار اضلاع الموڑا، پتھوراگڑھ، باگیشور اور چمپاوت میں ایک الگ الگ دفتر کھولے گئے اور کلیدی ملزم لوگوں کئی طرح کے سبز باغ دیکھا کر کروڑوں روپے کی رقم ہڑپ کر فرار ہو گیا۔ کمپنی کے خلاف چار اضلاع میں 21 معاملے درج ہیں۔

کماؤں کے انسپکٹر جنرل پولیس آف پولیس اجے روتیلہ کے نوٹس میں آنے کے بعد سوسائٹی کے کارکنوں کے خلاف کارروائی کرنے کے لئے چمپاوت کے پولیس سپرنٹنڈنٹ (ایس پی) لوکیشور سنگھ کی سربراہی میں دو ٹیمیں تشکیل دی گئیں۔ لوکیشور سنگھ نے کہا کہ پہلے چاروں اضلاع کے انسپکٹروں کی ایک میٹنگ طلب کی گئی تھی اور سوسائٹی کے خلاف موجود حقائق کو جمع کیا گیا تھا۔ اس کے بعد ملزم کے بارے میں اطلاع ملی کہ وہ لکھنؤ میں واقع علی گنج کے سیکٹر جے میں بی 17 میں رہائش پذیر ہے۔ بالآخر پولیس نے ملزم کو ہفتے کے روز لکھنؤ کے تھانہ وبھوتی سے گرفتار کرلیا۔

لوکیشور سنگھ نے بتایا کہ کریڈٹ کمپنی میں سرمایہ کاری کے نام پر ملزم نے کماؤں ڈویژن کے 3285 غریب اور سادہ لو لوگوں سے تقریباً 10 کروڑ روپئے کی رقم ہڑپ کر چکا ہے۔ الزام ہے کہ چمپاوت ضلع میں 2181 سرمایہ کاروں سے 5.90 کروڑ، ضلع الموڑا کے سومیشور اور چوکھوٹیا میں 599 افراد سے 2.9 کروڑ، باگیشور ضلع میں باگیشور اور بیج ناتھ میں 416 سرمایہ کاروں سے 1.77 کروڑ اور پتھورا گڑھ سے 89 افراد سے 18.92 لاکھ روپئے ہڑپ کر چکا ہے۔ پولیس کے لئے یہ ایک بڑی کامیابی بتائی جا رہی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔