امرتسر حادثہ: بریک لگائے تھے لیکن ہجوم نے پتھراؤ کر دیا، ڈرائیور کا انکشاف

پولس کمشنر ایس ایس شریواستو نے میڈیا سے تقریبا کی اجازت دینے کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ پورے معاملہ کی جانچ چل رہی ہے۔

تصویر سوشل میڈیا 
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

21 Oct 2018, 9:09 PM
امرتسر حادثہ: بریک لگائے تھے لیکن ہجوم نے پتھراؤ کر دیا، ڈرائیور کا انکشاف

امرتسر ریل حادثہ کے بعد پہلی بار ٹرین کے ڈرائیور کا بیان منظر عام پر آیا ہے۔ ڈرائیور کا کہنا ہے کہ اس نے ہجوم کو دیکھ کر ایمرجنسی بریک لگائے تھے لیکن بھیڑ نے ٹرین پر پتھراؤ کر دیا، لہذا مسافروں کی حفاظت کے پیش نظر اسے ٹرین کو آگے بڑھانے پر مجبور ہونا پڑا۔

جمعہ کو امرتسر کے جوڑا پھاٹک پر ہوئے ریل حادچہ کی تفتیش جاری ہے۔ دریں اثنا ٹرین کے ڈرائیور اروند کمار کا تحریری بیان منظر عام پر آیا ہے۔ اروند کمار نے کہا ’’حادثہ کے دن میں نے ہجوم کو دیکھ کر ایمرجنسی بریک کا استعمال کیا تھا لیکن ہجوم نے پتھراؤ شروع کر دیا تو مسافروں کی حفاظت کے پیش نظر مجھے ٹرین کو آگے بڑھانا پڑا۔‘‘

واضح رہے کہ حادثہ دشہرہ کے دن اس وقت پیش آیا تھا جب ریل کی پٹری سے ملحقہ میدان میں روان دہن ہو رہا تھا۔ دہن کے بعد ہجوم نے پیچھے ہٹنا شروع کر دیا اور لوگ پٹری پر جمع ہو گئے۔ دریں اثنا وہاں سے ٹرین گزری جس کی زد میں آکر 59 افراد جاں بحق ہو ئے جبکہ 60 سے زیادہ افراد زخمی ہو گئے۔

ٹرین کے ڈرائیون اروند کمار نے اپنے بیان میں لکھا، ’’جمعہ کی شام جالندھر سٹی سے چلنے کے بعد جب گاڑی جوڑا پھاٹک کے نزدیک پہنچی تو ٹرین کی دنوں جانب یلو لائٹیں جلی تھیں اور ٹرین کم رفتار سے آگے بڑھ رہی تھی۔ جب ٹریک پر ہجوم نظر آیا تو میں نے ایمرجنسی بریک کا استعمال کیا لیکن ہجوم نے مجھ پر پتھراؤ شروع کردیا۔ اس کے بعد مجبوراً مجھے گاڑی کو آگے بڑھانا پڑا۔ امرتسر اسٹیشن پر پہنچ کر افسران کو میں نے اس کے حوالہ سے اطلاع دے دی تھی۔‘‘

21 Oct 2018, 5:57 PM
امرتسر پولس نے کیا ٹریک کے پاس تقریب کی اجازت دینے کا اعتراف

امرتسر پولس نے یہ اعتراف کر لیا ہے کہ اسی نے جوڑا پھاٹک کے نزدیک دشہرہ کا تہوار منانے کے لئے تقریب کے انعقاد کی اجازت دی تھی۔ پولس کمشنر ایس ایس شریواستو نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے یہ اطلاع دی۔ انہوں نے کہا کہ پورے معاملہ کی جانچ چل رہی ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل کانگریس پر یہ الزام لگایا جا رہا تھا کہ پارٹی نے بغیر پولس کی اجازت کے ریلوے پھاٹک کے پاس تقریبا کا انعقاد کرایا۔ جمعہ کو دشہرہ کے موقع پر راون دہن کے دوران ٹرین کی زد میں آے سے 60 افراد کی جان چلی گئی تھی۔

21 Oct 2018, 4:30 PM
شادی کے بندھن میں بندھیں گے دیپیکا اور رنویر، شادی کی تاریخ طے

بالی ووڈ کے دو معروف ستارے دیپکا پادوکون اور رنویر سنگھ رشتہ ازدواج میں بندھنے جا رہے ہیں۔ دونوں کی شادی کی تاریخ پکی ہو گئی ہے۔ رنویر سنگھ نے ٹوئٹ پر شادی کا کارڈ پوسٹ کر کے اس کی اطلاع دی۔ شادی کے کارڈ کے مطابق رنویر اور دیپکا کی شادی 14 اور 15 نومبر کو ہوگی۔

سفید اور گولڈن کلر کے شادی کے کارڈ کو شیئر کرتے ہوئے دییپکا اور رنویر نے اپنے مداحوں کو بڑا سرپرائز دیا ہے۔

شادی کے کارڈ میں لکھا ہے، ’’ہمیں آپ کو بتاتے ہوئے بے حد خوشی ہو رہی ہے کہ ہمارے خاندانوں کے آشیرواد سے ہماری شادی 14 اور 15 نومبر کو طے ہوئی ہے۔ بہت سارا پیار، دیپیکا اور رنویر۔‘‘

شادی کے کارڈ میں اس بات کا ذکر نہیں کیا گیا ہے کہ دیپیکا اور رنویر شادی کہاں کریں گے۔ حالانکہ امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ دونوں ستارے بیرون ملک میں روایتی انداز میں شادی کریں گے۔

دیپیکا اور رنویر ہمیشہ ساتھ رہے ہیں اس لئے اکثر ان کے رشتہ کو لے کر میڈیا میں خبریں آتی رہی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق یہ دنوں گزشتہ دنوں ایک دوسرے کو ڈیٹ بھی کر رہے تھے۔ ’دیپویر‘ کے نام سے اپنے مداحوں میں مشہور اس جوڑے نے کئی فلمیں ایک ساتھ کی ہیں، ان میں گلویوں کی راسلیلا- رام لیلا، باجیراو مستانی اور پدماوت شامل ہیں۔

21 Oct 2018, 1:04 PM

پنجاب کے امرتسر میں جوڑا پھاٹک کے نزدیک ریلوے ٹریک پر آج کچھ لوگوں نے ہنگامہ کیا۔ اطلاعات کے مطابق کچھ مظاہرین نے پولس پر پتھراؤ کیا جس کے بعد پولس نے ہجوم کو منتشر کرنے کے لئے لاٹھی جارچ کر دیا۔

مظاہرین نے ٹرین حادثہ پر انتظامیہ کے خلاف ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے ریلوے ٹریک بھی جام کر دیا تھا۔ پولس ریلوے ٹریک کو خالی کرانے کے لئے ریلوی ٹریک سے ہٹا رہی تھی لیکن لوگوں نے نہیں سنی۔ لاٹھی چارج کے بعد مظاہرین کو وہاں سے کھدیڑا گیا۔

ادھر مقامی میڈیا کے مطابق، جوڑا پھاٹک حادثہ کے بعد شرارت عناصر فعال ہو گئے ہیں۔ پولس کو اطلاعات مل رہی ہیں کہ کچھ لوگ متاثرہ خاندانوں کی آڑ میں توڑ پھوڑ کر کے شہر کا ماحول خراب کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ اطلاع موصول ہونے کے بعد پولس نے موقع پر بھاری فورس کو تعینات کر دیا گیا تھا۔

مظاہرین کی پتھربازی میں پولس کا ایک جوان زخمی ہو گیا ہے۔ ہیڈ کانسٹیبل امرپال سنگھ نے بتایا کہ زخمی جوان کی آنکھ پر چوٹ لگی ہے۔

وہیں موقع پر موجود ڈی ایس پی پلوندر سندھو نے کہا کہ مظاہرین کی پتھربازی کو قابو کر لیا گیا ہے۔ ساتھ ہی فورس لگا کر ٹریک کو خالی کرا دیا گیا ہے۔ ریلوے ٹریفک کو دوبارہ شروع کیا جا رہا ہے۔