بڑی خبر: ’بھیم آرمی‘ لیڈر چندر شیکھر جلد ہوں گے آزاد، یوگی حکومت ہوئی مجبور

جموں وکشمیر کے ضلع ریاسی کے ککریال میں جمعرات کو شری ماتا ویشنو دیوی یونیورسٹی کے نزدیک ملی ٹینٹوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان مسلح تصادم

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

13 Sep 2018, 10:12 PM
یوگی حکومت نے چندر شیکھر راون کو قید سے آزاد کرنے کا جاری کیا حکم

تقریباً 16 مہینوں سے جیل میں بند ’بھیم آرمی‘ کے سربراہ چندر شیکھر عرف راون کو اتر پردیش حکومت نے آزاد کرنے کا فیصلہ لیا ہے۔ اتر پردیش کے چیف سکریٹری برائے داخلہ اروند کمار نے اس سلسلے میں بتایا کہ چندر شیکھر عرف راون کو آزاد کرنے کا حکم سہارنپور کے ضلع مجسٹریٹ کو بھیج دیا گیا ہے۔ چندر شیکھر کے ساتھ بند دو دیگر ملزمین سونو ولد نتھی رام اور شیو کمار ولد رام داس، جو کہ شبیر پور کا باشندہ ہے، کو بھی آزاد کرنے کا فیصلہ لیا گیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ چندر شیکھر راون کو آزاد کرانے کے لیے دلت طبقہ نے کئی بار احتجاجی مظاہرہ کیا اور بار بار یوگی حکومت پر اس سے متعلق بار بار دباؤ بنایا لیکن انھوں نے اب تک کوئی سنوائی نہیں کی تھی۔ اب جب کہ دلت طبقہ نے کئی تنظیموں سے ملک اسی ماہ کے آخر میں ایک عظیم الشان احتجاج کا ذہن تیار کر لیا تھا تو مجبوراً یوگی حکومت کو انھیں آزاد کرنے کے بارے میں سوچنا پڑا۔ بتایا جاتا ہے کہ یہ قدم اٹھا کر بی جے پی دلتوں کے درمیان اپنی شبیہ کو بہتر بنانے کی کوشش کر رہی ہے۔

13 Sep 2018, 4:57 PM
ککریال جموں میں جاری مسلح تصادم میں دو جنگجو ہلاک، 9 سیکورٹی اہلکار زخمی

جموں وکشمیر کے ضلع ریاسی کے ککریال میں جمعرات کو شری ماتا ویشنو دیوی یونیورسٹی کے نزدیک ملی ٹینٹوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان مسلح تصادم چھڑ گیا۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق جاری تصادم میں اب تک دو ملی ٹینٹ ہلاک اور جبکہ نو سیکورٹی اہلکار زخمی ہوگئے ہیں۔


ایک سینئر پولیس عہدیدار نے یو این آئی کو بتایا ’’سری نگر جموں قومی شاہراہ پر جھجر کوٹلی کے مقام پر بدھ کی صبح تین جنگجوؤں پر مشتمل ایک گروپ فائرنگ کے بعد جائے واردات سے رفو چکر ہوگیا تھا۔ علاقہ میں ایک وسیع پیمانے کا تلاشی آپریشن شروع کیا گیا تھا۔ مذکورہ جنگجوؤں کے گروپ کو جمعرات کو ککریال میں شری ماتا ویشنو دیوی یونیورسٹی کے نزدیک دیکھا گیا۔‘‘

13 Sep 2018, 9:11 AM
پٹرول اور ڈیزل کے داموں میں پھر اضافہ

ملک بھر میں جمعرات کے روز پھر سے پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ ہو گیا۔ دہلی میں پٹرول کے داموں میں 13 پیسے اور ڈیزل کے داموں میں 11 پیسے فی لیٹر کا اضافہ ہوا ہے۔

اضافہ کے بعد دہلی میں پٹرول 81 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 73.08 روپے فی لیٹر تک پہنچ گیا ہے۔ وہیں ممبئی میں پٹرول 88.39 روپے اور ڈیزل 77.58 روپے فی لیٹر ہو گیا ہے۔

واضح رہے کہ تقریباً 17 روز تیل قیمتوں میں اضافہ کے بعد کل بدھ کو قیمتوں میں ٹھہراؤ آیا تھا۔ اس دوران تقریباً ہر روز پٹرول اور ڈیزل کے دام تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچتے رہے۔ تیل کے آج کے دام بھی تاریخ کی بلند ترین سطح پر ہیں۔