جموں میں لشکر طیبہ کا ایک آپریٹو کو ’آئی ای ڈی‘ کے ساتھ گرفتار: پولیس سربراہ

سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ جموں و کشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ نے ہفتے کی شام نروال علاقے میں لشکر طیبہ کے آپریٹو کو دھماکہ خیز مواد سمیت گرفتار کیا ہے۔

دلباغ سنگھ، تصویر آئی اے این ایس
دلباغ سنگھ، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

جموں: جموں و کشمیر پولیس کے سربراہ دلباغ سنگھ نے دعویٰ کیا ہے کہ جموں میں لشکر طیبہ کے ایک آپریٹو کے قبضے سے پانچ کلو گرام وزنی آی ای ڈی برآمد کر کے ملی ٹنٹوں کے ایک بڑے منصوبے کو ناکام بنایا گیا ہے۔ پولیس سربراہ نے یو این آئی کو بتایا کہ 'جموں پولیس نے ایک پانچ تا چھ کلو گرام وزنی آئی ای ڈی برآمد کی ہے۔ یہ آی ای ڈی لشکر طیبہ کے ایک آپریٹو کو کسی بھیڑ بھاڑ والی جگہ پر نصب کرنے کے لئے دیا گیا تھا'۔ انہوں نے کہا کہ 'گرفتار شدہ شخص سے تفتیش کی جا رہی ہے اور اس معاملے میں مزید گرفتاریاں متوقع ہے'۔

سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ جموں و کشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ نے ہفتے کی شام نروال علاقے میں لشکر طیبہ کے آپریٹو کو دھماکہ خیز مواد سمیت گرفتار کیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ 'مذکورہ شخص کو ایک مشہور شاپنگ مال کے قریب اسلحہ، گولہ بارود اور پانچ کلو گرامی وزنی آئی ای ڈی سمیت گرفتار کیا گیا'۔


مذکورہ ذرائع نے دعویٰ کیا کہ اس گرفتاری کے نتیجے میں جموں شہر میں حملے کے ایک بڑے منصوبے کو ناکام بنایا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ 'مشتبہ شخص کو گرفتاری کے فوراً بعد محفوظ جگہ پر لے جایا گیا جہاں اس سے تفتیش ہو رہی ہے'۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔