’یونیفارم گولڈ پرائس‘ نافذ کرنے والی ہندوستان کی پہلی ریاست بنا کیرالہ، اب سبھی دکانوں پر سونے کی ہوگی یکساں قیمت

یونیفارم گولڈ پرائس نافذ ہونے کے بعد اب کیرالہ میں سونے کی قیمتیں بینک شرح کے مطابق ہی طے ہوں گی، اس کے تحت سونے کے زیورات سبھی شہروں کی ہر دکان پر یکساں قیمت میں ہی فروخت ہو سکیں گے۔

سونے کی قیمت
سونے کی قیمت
user

قومی آوازبیورو

اگر آپ کو سونے کے زیورات خریدنے ہوتے ہیں تو الگ الگ شہروں میں سونے کی الگ الگ قیمت کے سبب زیورات کی قیمت بھی الگ الگ دینی ہوتی ہے۔ لیکن کیرالہ اب ایسا نہیں ہوگا۔ اس ریاست میں آپ کسی بھی شہر اور کسی بھی دکان میں چلے جائیں، سونے کی قیمت یکساں ہوگی۔ ایسا اس لیے کیونکہ کیرالہ میں ’یونیفارم گولڈ پرائس‘ کا نفاذ ہو گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی کیرالہ ملک کی ایسی پہلی ریاست بن گئی ہے جہاں یونیفارم گولڈ پرائس نافذ ہوا ہے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ یونیفارم گولڈ پرائس نافذ ہونے کے بعد اب کیرالہ میں سونے کی قیمتیں بینک شرح کے مطابق ہی طے ہوں گی۔ اس کے تحت سونے کے زیورات سبھی شہروں کی ہر دکان پر یکساں قیمت میں ہی فروخت ہو سکیں گے۔ لیکن سب سے اہم بات یہ ہے کہ یہ اصول صرف 916 کی شفافیت والے 22 کیریٹ سونے پر ہی نافذ ہوگا۔ یعنی اس سے کم کیریٹ والے سونے کی قیمت اب بھی کیرالہ کے الگ الگ شہروں میں الگ الگ ہی ہوگی۔


کیرالہ کے اہم جویلرس یعنی مالابار گولڈ اینڈ ڈائمنڈس، جویالوکس اور کلیان جویلرس نے گزشتہ ہفتہ بینک شرح کی بنیاد پر گاہکوں کو ایک ہی شرح پر سونا دستیاب کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ واضح رہے کہ سونے کی خرید و فروخت کے معاملے میں کیرالہ ہندوستان میں اول مقام پر ہے اور یہاں پر سب سے زیادہ سونے کی خریداری ہوتی ہے۔ اس وقت شادیوں کا سیزن ہے، اور اس لیے سبھی شہروں میں یکساں قیمت پر سونا ملنا گاہکوں کے لیے فائدہ مند ثابت ہوگا۔

بہرحال، انڈیا بلین اینڈ جویلرس ایسو سی ایشن کی طرف سے بھی اس بات کی جانکاری دی گئی ہے کہ سونے کی یکساں شرح شروع کرنے والا کیرالہ ملک کی پہلی ریاست ہے۔ اس سے قبل کیرالہ میں وَن انڈیا وَن گولڈ ریٹ پالیسی کو لے کر گزشتہ ہفتہ مالابار گروپ کے سربراہ ایم پی احمد نے کہا تھا کہ یہ قدم ریاست بھر میں گولڈ کسٹمرس کے مفادات کی حفاظت کرنے اور قیمتوں میں شفافیت لانے میں مدد کرے گا۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔