کشمیر: نظربند سینئر پی ڈی پی لیڈر نعیم اختر علیل، اسپتال منتقل

پی ڈی پی کے ترجمان نجم الصادق نے تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ شام طبیعت ناساز ہونے پر محبوس لیڈر کو علاج و معالجے کے لئے خیبر اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

پی ڈی پی لیڈر نعیم اختر / تصویر آئی اے این ایس
پی ڈی پی لیڈر نعیم اختر / تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

سری نگر: پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے سینئر لیڈر اور سابق وزیر نعیم اختر علیل ہوگئے ہیں اور انہیں جمعرات کی صبح علاج و معالجے کے لئے اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق نعیم اختر مولانا آزاد روڈ پر واقع ایم ایل اے ہوسٹل میں گزشتہ بیس دنوں سے نظر بند ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ موصوف سابق وزیر کو طبیعت ناساز ہونے پر جمعرات کی صبح علاج و معالجے کے لئے خیبر اسپتال منتقل کیا گیا۔

موصوف سابق وزیر کی بیٹی شہر یار خانم نے بتایا کہ اسپتال منتقلی سے پہلے میرے والد 40 منٹ تک بے ہوش تھے۔ انہوں نے اپنے ایک ٹوئٹ میں کہا کہ کم سے کم ایک پولیس افسر کو رحم آیا، جنہوں نے مجھے اپنے والد کے اسپتال میں داخل ہونے کے بارے میں نیم شب کو مطلع کیا، میں ان کی مشکور ہوں۔

دریں اثنا پی ڈی پی کے ترجمان نجم الصادق نے تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ شام طبیعت ناساز ہونے پر محبوس لیڈر کو علاج و معالجے کے لئے خیبر اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اختر صاحب کی حالت مستحکم ہے لیکن وہ فی الوقت طبی نگہداشت میں ہیں‘۔

موصوف ترجمان نے اپنے ایک ٹوئٹ میں کہا کہ ’پارٹی کے سینئر لیڈران نعیم صاحب، سرتاج صاحب اور منصور صاحب ان کی سن رسیدگی اور غیر واضح الزامات کے با وصف تین ہفتوں سے مسلسل حراست میں ہیں۔ نعیم صاحب کی طبیعت گزشتہ شام نا ساز ہوئی جس کے بعد انہیں اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ آئی سی یو میں ہیں‘۔

قابل ذکر ہے کہ مرکزی حکومت کے پانچ اگست 2019 کے فیصلوں کے پیش نظر سینکڑوں سیاسی لیڈروں کے ساتھ نعیم اختر کو بھی نظر بند کیا گیا تھا اور انہیں سال گزشتہ تمام نظر بند لیڈروں کی رہائی کے بعد رہا کیا گیا تھا۔ تاہم سال گزشتہ 21 دسمبر کو انہیں ڈی ڈی سی انتخابات کی ووٹ شماری سے قبل اپنی رہائش سے ایک بار پھر حراست میں لیا گیا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next